بھارتی میں جنسی زیادتی کےایک اور ملزم کے ساتھ مشتعل ہجوم کی درندگی،دل دہلا دینے والا سلوک

بھارتی میں جنسی زیادتی کےایک اور ملزم کے ساتھ مشتعل ہجوم کی درندگی،دل دہلا ...
بھارتی میں جنسی زیادتی کےایک اور ملزم کے ساتھ مشتعل ہجوم کی درندگی،دل دہلا دینے والا سلوک

  

نئی دلی (نیوز ڈیسک) بھارتی ریاست کی خواتین کو جنسی درندوں سے بچانے میں مکمل ناکامی کے بعد عوام نے قانون کو اپنے ہاتھ میں لے لیا ہے اور چند روز قبل ریاست ناگا لینڈ میں عصمت دری کے ملزم کو جیل سے نکال کر ہلاک کرنے کے بعد اب اسی ریات میں ایک اور ملزم کو عوام نے سرعام تشدد کرکے ہلاک کردیا ہے۔

مزید پڑھیں:دبئی میں عرب خاتون پاکستانی ڈرائیور کو ادائیں دکھا کر ہاتھ کر گئی

پولیس کے مطابق ایبوچا نامی 18 سالہ نوجوان پر الزام تھا کہ اس نے میلوری گاﺅں کی ایک 11 سالہ لڑکی کو زیادتی کا بعد قتل کردیا۔ گزشتہ سال ستمبر میں پیش آنے والے واقعہ کے بعد گاﺅں والوں نے مجرم کی تلاش شروع کی اور اسی دوران ایبوچا اپنے گھر سے غائب ہوگیا جس کی وجہ سے اس پر شک مضبوط ہوگیا۔ ملزم ظلم کا نشانہ بننے والی لڑکی کا ہمسایہ تھا۔ گاﺅں والوں نے بالآخر اسے تلاش کرلیا اور اس کے بازوﺅں سے رسی باندھ کر گاﺅں کے مرکزی چوک میں لٹکا دیا۔ کئی گھنٹے تک اسے تشدد کا نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجہ میں اس کی موت ہوگئی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم کی ہلاکت کی ویڈیو گزشتہ سال ستمبر میں بنائی گئی لیکن یہ اب منظر عام پر آئی ہے۔

مزید : انسانی حقوق