روس میں زرعی اشیاء کی برآمدات بڑھانے کے عمدہ مواقع پائے جاتے ہیں‘ مزمل صابری

روس میں زرعی اشیاء کی برآمدات بڑھانے کے عمدہ مواقع پائے جاتے ہیں‘ مزمل ...

اسلام آباد ( کامرس ڈیسک ) اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر مزمل حسین صابری نے کہا کہ پاکستان کیلئے روس میں زرعی اشیاء کی برآمدات کوبڑھانے کے عمدہ مواقع پائے جاتے ہیں لہذا حکومت زرعی شعبے کے برآمدکنندگان کو اس سلسلے میں بھرپور تعاون فراہم کرے تا کہ وہ روس کی بڑی مارکیٹ میں بہتر رسائی حاصل کر سکیں۔انہوں نے کہا کہ روس نے 2013کے دوران 43ارب ڈالر کی زرعی اشیاء امپورٹ کیں جب کہ روس کی طرف سے امریکہ اور یورپ کی زرعی مصنوعات پر پابندی لگانے کے فیصلے نے پاکستان کیلئے ایک بہترین موقع پیدا کر دیا ہے کہ وہ روس میں اپنی زرعی مصنوعات کی برآمدات بڑھانے کیلئے کوششیں تیز کرے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور روس کی سالانہ دوطرفہ تجارت 50کروڑ ڈالر سے بھی کم ہے حلانکہ اس میں اضافہ کرنے کی بے شمار صلاحیت موجود ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان روس کو چاول، سبزیاں و پھل، آلو، ڈیری مصنوعات اور سمندری خوراک سمیت متعدد زرعی مصنوعات برآمد کر سکتا ہے کیونکہ روس میں ان چیزوں کی مانگ دن بند بڑھتی جا رہی ہے۔لہذا حکومت کو چاہیے کہ وہ زرعی شعبے کے برآمدکنندگان کو ان مواقعوں سے استفادہ حاصل کرنے کیلئے ہرممکن تعاون فراہم کرے۔آئی سی سی آئی فاؤنڈر گروپ کے چیئرمین عبدالرؤف عالم نے کہا کہ روس سالانہ 1.60ارب ڈالر کافروٹ امپورٹ کرتا ہے لیکن پاکستان کا حصہ اس میں 3فیصد سے بھی کم ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بہتر مارکیٹنگ و پیکنگ اور ایکسپورٹرز کو سہولیات فراہم کر کے پاکستان روس میں فروٹ کی برآمدات میں نمایاں اضافہ کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ روس ہر سال تقریبا 4.3ارب ڈالر کی ڈیری مصنوعات امپورٹ کرتا ہے جبکہ پاکستان دودھ پیدا کرنے والے بڑے ممالک میں شمار ہوتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ڈیری مصنوعات سمیت دیگر زرعی ایشاء کی ویلیو ایڈیشن کر کے پاکستان زرعی برآمدات میں خاطر خواہ اضافہ کر سکتا ہے لہذا حکومت زرعی مصنوعات کی ویلیو ایڈیشن کیلئے نجی شعبے کے ساتھ تعاون کرے۔ فراہم کرے۔اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سینئر نائب صدر محمد شکیل منیر نے کہا کہ پاکستان کیلئے روس میں آلو کی برآمدات بڑھانے کے بھی وسیع مواقع موجود ہیں لہذا انہوں نے پاکستانی کمپنیوں پر زور دیا کہ وہ کوارنٹائن اور کوالٹی سٹینڈرڈز کو عالمی معیار کے مطابق لانے کیلئے کوششیں تیز کریں جس سے پاکستان روس اور سنٹرل ایشیاء سمیت دیگر ممالک کی طرف زرعی مصنوعات کی برآمدات میں بہتر اضافہ کر سکتا ہے۔اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے نائب صدمحمد اشفاق حسین چھٹہ نے حکومت پر زور دیا کہ وہ زرعی شعبے کے تاجروں کو روس کا دورہ کرنے میں تعاون اور سہولت فراہم کرے تا کہ وہ روس کی مارکیٹ میں پاکستان کی زرعی مصنوعات کے بارے میں پائی جانے والی صلاحیت سے پوری طرح آگاہی حاصل کر کے برآمدات کو بڑھانے کیلئے کوششیں تیز کر سکیں۔

مزید : کامرس