4سال کے دوران موبائل فونز کی اسمبلنگ میں 13ملین یونٹس کا اضافہ

4سال کے دوران موبائل فونز کی اسمبلنگ میں 13ملین یونٹس کا اضافہ

  



اسلام آباد (اے پی پی) موبائل فونز کی اندرون ملک اسمبلنگ میں گزشتہ چار سال کے دوران 12.55 ملین یونٹس کا اضافہ ہوا ہے۔ سال 2019ء کے دوران پاکستان میں 12.84 ملین یونٹس موبائل فون سیٹ تیار کئے گئے۔ انجینئرنگ ڈویلپمنٹ بورڈ (ای ڈی بی) اور موبائل ڈیوائس مینو فیکچرنگ پالیسی کے اعدادو شمار کے مطابق 2016ء کے دوران پاکستان میں تیار کئے جانے والے موبائل فونز کی تعداد 0.29 ملین سیٹ رہی تھی جبکہ 2017ء کے دوران یہ تعداد بڑھ کر 1.72 ملین یونٹس تک پہنچ گئی اور اسی طرح 2018ء کے دوران اندرون ملک موبائل فون سیٹوں کی اسمبلنگ میں نمایاں اضافہ سے تعداد 5.2 ملین یونٹس تک بڑھ گئی۔ رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال کے دوران پاکستان میں 12.84 ملین موبائل فون سیٹ تیار کئے گئے۔ اس طرح صرف چار سال کے قلیل عرصہ کے دوران اندرون ملک موبائل فون سیٹس کی تیاری میں 12.55 ملین یونٹس کا ریکارڈ اضافہ ہوا۔اعدادوشمار کے مطابق گزشتہ چار کلینڈر سالوں کے دوران موبائل فونز کی درآمدات میں ملا جلا رجحان رہا ہے۔ سال 2016ء کے دوران پاکستان نے 21.6 ملین یونٹس درآمد کئے تھے تاہم آئندہ سال 2017ء کے دوران موبائل فونز کی درآمدات کا حجم 19.8 ملین یونٹس تک کم ہوگیا اسی طرح سال 2018ء کے دوران بھی درآمدات میں کمی کا رجحان رہا اور دوران سال پاکستان کی موبائل فونز سیٹوں کی درآمدات کا حجم 17.2 ملین یونٹس تک کم ہوگیا تاہم گزشتہ سال 2019ء کے دوران درآمدات میں نمایاں اضافہ ہوا اور اس دوران پاکستان کی موبائل فونز کی درآمدات 28.2ملین یونٹس تک بڑھ گئیں۔

مزید : کامرس