جنوبی پنجاب صوبے کے قیام کیلئے تمام جماعتوں کی حمایت درکار:شاہ محمود

  جنوبی پنجاب صوبے کے قیام کیلئے تمام جماعتوں کی حمایت درکار:شاہ محمود

  



ملتان(مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ علیحدہ صوبے کے قیام کیلئے ہمیں تمام جماعتوں اور طبقات کی حمایت کی ضرورت ہے،،تحریک انصاف اسمبلی میں بل لائیگی اور دیگر جماعتوں سے تائیدحاصل کرنے کی کوشش کریگی،ن لیگ،پی پی اراکین سے گزارش ہے سیاست سے بالاتر ہو کرجنوبی پنجاب صوبے کی حمایت کریں، یکم جولائی کو جنوبی پنجاب کا سیکرٹریٹ فعال ہوجائے گا جس کیلئے درکار وسائل اور انتظامی ڈھانچے کا بندوبست کرنا پڑے گا، جنوبی پنجاب کا دارالحکومت کونسا شہر ہوگا اس کا تعین کرنے کا کام جنوبی پنجاب کی منتخب اسمبلی کیلئے چھوڑنے کا فیصلہ کیا گیا،ہماری کوشش ہو گی کہ اتفاق رائے ہوجائے کیوں کہ جمہوریت میں اکثریت کو اہمیت دی جاتی ہے،نواز شریف کے پاس دو تہائی اکثریت تھی، لیکن ان کی ترجیحات میں جنوبی پنجاب صوبہ نہیں تھا۔ ملتان میں پریس کانفرنس میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جنوبی پنجاب صوبے کے قیام پر کوئی ابہام نہیں،اپریل میں سیکرٹریٹ کیلئے افسر کام شروع کریں گے۔انہوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کیلئے بہاولپور کا نام نہیں لیا،آگے بڑھنے کیلئے سیکریٹریٹ بنانے پر اتفاق ہوا،تمام جماعتوں سے گزارش ہے منفی بیانات کے بجائے حکومت سے تعاون کریں۔وزیر خارجہ نے کہا کہ پی ٹی آئی اپنے منشور کے مطابق بل لائے گی۔انہوں نے کہا مختلف رہنما صوبے کی حمایت اخباری بیانات میں کررہے ہیں وہ اخباروں کی زینت بننے کے بجائے عملی اقدام کریں اور ہماری آواز میں آواز ملائیں۔ شاہ محمود نے کہاہمیں کریڈٹ سے غرض نہیں،صوبہ بنادیں،گیلانی صاحب نے سہرا پہننا ہے تو میں پہنانے کو تیار ہوں بلاول کہیں تو انہیں پہنانے کو تیار ہوں اور اگر کوئی ن لیگی دوست خواہشمند ہوتو اسے بھی پہنانے کو تیارہوں۔

شاہ محمود

مزید : صفحہ اول