تعلیمی ادارے بند کرنا ہی کرونا وائرس کا حل نہیں،عوامی و سماجی حلقے

تعلیمی ادارے بند کرنا ہی کرونا وائرس کا حل نہیں،عوامی و سماجی حلقے

  



کوٹ عبدالمالک (نمائندہ خصوصی) حکومت پاکستان نے کرونا وائرس کے باعث ملک بھر کے تعلیمی ادارے بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔جس پر کوٹ عبدالمالک کے سرکاری و پرائیویٹ تعلیمی ادارے بندرہے۔عوامی سماجی تنظیموں اور والدین نے اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ کیا تعلیمی ادارے بند کرنا ہی کرونا وائرس کا حل ہے؟اس وائرس سے بچاؤ کے لیے ہنگامی اقدامات کیے جانا زیادہ ضروری ہے جو پسماندہ علاقوں میں قطعاً نظر نہیں آئے۔کرونا وائرس کا شور تو مچ اٹھا لیکن عوام کی آگاہی کے لیے کوئی عملی قدم سامنے نہیں آیا۔جماعت نہم کے جاری امتحانات بھی غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی کردیے گئے ہیں۔جماعت نہم کے امتحانات ملتوی کرنے سے بچوں کو شدید پریشانی کا سامنا ہے۔والدین نے کہا ہے کہ 5اپریل تک تعلیمی ادارے بند رہنے سے بچوں کا تعلیمی نقصان ہوگا اور حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا ہے کہ جلد تعلیمی اداروں کو کھولا جائے۔

سماجی حلقے

مزید : میٹروپولیٹن 1