پاکستانی اداکارہ مہر بانو کے شرمندہ ہونے کا وقت ہوا چاہتا ہے ، ہم جنس پرستی سے متعلق کیتھولک چرچ کا تہلکہ خیز بیان سامنے آگیا 

پاکستانی اداکارہ مہر بانو کے شرمندہ ہونے کا وقت ہوا چاہتا ہے ، ہم جنس پرستی ...
پاکستانی اداکارہ مہر بانو کے شرمندہ ہونے کا وقت ہوا چاہتا ہے ، ہم جنس پرستی سے متعلق کیتھولک چرچ کا تہلکہ خیز بیان سامنے آگیا 

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )ویٹی کن کیتھولک چرچ نے ہم جنس پرستوں کی حمایت نہ کرنے کا اعلان کردیا ۔واضح رہے کہ پاکستانی اداکارہ مہربانو نے ہم جنس پرستی کے حق میں بیان دیاتھا۔

ویٹی کن میں رومن کیتھولک کے شعبے ’کانگریشن فار دی ڈاکٹرائن آف دی فیتھ‘نے ایک بیان میں کہا ہے کہ کیتھو لک چرچ گناہ کے فروغ کی حمایت نہیں کر سکتا ،گناہ کے لیے فضل اور رحمت بخشنا ناممکن ہے ۔ پوپ فرانسس نے عیسائی پادریوں کے فتوے کی توثیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس فتوے کا مقصد کسی کے ساتھ امتیازی سلوک برتنا نہیں بلکہ یہ مذہبی رواج کی سچائی کی یاد دہانی کرانا ہے۔

خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق حالیہ مہینوں میں جرمنی اور امریکہ کے پادریوں نے ہم جنس پرستوں کو چرچ کی طرف مائل کرنے کے لیے انہیں فضل وبرکات دینا شروع کردیا تھا۔بی بی سی کے مطابق ویٹیکن کیتھولک چرچ سے حال ہی میں پوچھا گیا تھا کہ آیا وہ ہم جنس پرستوں کو برکات دے سکتا ہے جس پر چرچ نے نفی میں جواب دیا ہے۔

ویٹی کن چرچ نے کہا ہے کہ صرف مرد اور عورت کے مابین نکاح کو فضل و برکات دی جاسکتی ہیں اور نہ کہ ہم جنس پرستوں کو،ایسے تعلقات یا رشتوں کو جس میں ہم جنس پرستی کا عنصر یا سرگرمی شامل ہو برکات دینا جائز نہیں ہے۔

اس سے قبل پوپ فرانسس نے کہا تھا کہ ہم جنس پرست بھی خدا کے بندے ہیں اور انہیں بھی اپنا خاندان بسانے کا حق ہے۔ کسی کو بھی خاندان سے باہر نہیں کیا جانا چاہیے یا کسی کی زندگی کو مصیبت میں نہیں ڈالنی چاہیے۔

واضح رہے کہ گزشتہ سال عورت مارچ میں پاکستانی اداکارہ مہر بانو کا ایک بیان کافی تنقید کا نشانہ بنا تھا جس میں انہوں نے ہم جنس پرستی کی حمایت کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہم جنس پرستی کوئی برائی نہیں ہے۔ ایک مرد کا دوسرے مرد سے محبت کرنا بالکل جائز ہے۔

مزید :

تفریح -