فیس بک پر پوسٹ، فلسطینی کو 9 ماہ کیلئے جیل بھیج دیا گیا

فیس بک پر پوسٹ، فلسطینی کو 9 ماہ کیلئے جیل بھیج دیا گیا
 فیس بک پر پوسٹ، فلسطینی کو 9 ماہ کیلئے جیل بھیج دیا گیا

  

مقبوضہ بیت المقدس (ویب ڈیسک) اسرائیل کی ایک مجسٹریٹ عدالت نے کسی یہودی شرپسندی کی اشتعال انگریزی کا نوٹس لینے کے بجائے ایک فلسطینی نوجوان کو محض اس الزام میں نو ماہ قید کی سزا سنائی ہے کہ اس نے اپنے ”فیس بک“ اکاؤنٹ پر پوسٹ شیئر کردی تھی جس میں بہ قول عدالت کے یہودیوں کے خلاف اشتعال انگیزی پھیلانے کی کوشش کی گئی تھی۔ العربیہ کے مطابق اسرائیلی عدالتی تاریخ کا یہ منفرد واقعہ ہے جس میں کسی معمولی ”فیس بک“ پوسٹ کی پاداش میں ایک فلسطینی شہری کو قید کی سزا سنائی گئی ہے۔ سزا پانے والے فلسطینی شہری کا تعلق تحریک ’فتح‘ سے ہے اور اس کا رہائشی علاقہ مقبوضہ بیت المقدس کی العیزریہ کالونی سے بتایا جاتا ہے۔ عدالتی حکم کے تحت ملزم کو 9 ماہ کے لئے جیل میں رکھا جائے گا۔

مزید : بین الاقوامی