خواتین اور خاندانوں کا خیال رکھنا ہماری بنیادی ذمہ داری ہے،ماروی میمن

خواتین اور خاندانوں کا خیال رکھنا ہماری بنیادی ذمہ داری ہے،ماروی میمن

  

لاہور(اے این این ) وزیر مملکت وچیئر پرسن بی آئی ایس پی ماروی میمن نے کہا ہے کہ بی آئی ایس پی سے استفادہ کرنے والی 5.4 ملین خواتین کی ہیپا ٹائٹس سکریننگ کے ساتھ ساتھ ان کا علاج وزیر اعظم کی صحت انشورنس سکیم سے کروایا جائے گا،،سیاست اپنی جگہ ،حکومت ہر کام عوامی خدمت کے جذبے کے ساتھ کر رہی ہے‘ بی آئی ایس پی ایک ماڈل منصوبہ ہے جسے قومی و بین الاقوامی سطح پر آگے بڑھایا جائے گا۔وہ اتوار کے روز مریدکے میں بی آئی ایس پی سے مستفید ہونے والی خواتین کی ہیپاٹائٹس سکریننگ مہم کے آغاز پر گفتگو کر رہی تھیں۔ماروی میمن نے کہا کہ وزیر اعظم کے صحت مند پروگرام کے تحت خواتین کا خیال رکھنا ہماری ذمہ داری ہے،انہوں نے کہا کہ بی آئی ایس پی صرف وظیفہ تک محدود نہیں بلکہ خواتین اور خاندانوں کا خیال رکھنا بھی ہماری ذمہ داریوں میں شامل ہے ،ملک کے 32 اضلاع میں بی آئی ایس پی کے ذریعے بچوں کو تعلیمی وظائف بھی دئے جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا خواتین گھربار کا زیادہ خیال رکھتی ہیں لیکن اس کے ساتھ ساتھ انہیں اپنی صحت کا بھی خود خیال رکھنا چاہئے کیونکہ ماں کی صحت اچھی ہو گی تو بچوں اور خاندان کی صحت بھی اچھی ہوگی۔انہوں نے کہا کہ خواتین کی کثیر تعداد کی ہیپاٹائیٹس سکریننگ میں دلچسپی سے ظاہر ہوتا ہے کہ خواتین میں ان امراض کے بارے میں شعورموجود ہے، ہیپا ٹائیٹس میں مبتلاخواتین کو ما یو س نہیں ہونا چاہئے، حکومت ان کا علاج کروائے گی۔ اس مو قع پروزیر مملکت نے سکریننگ کیمپ میں کام کرنے والے رضا کاروں میں سرٹیفکیٹ بھی تقسیم کئے۔

مزید :

صفحہ آخر -