نواز شریف کرپشن کا گاڈفادر ہے ،جے آئی ٹی میں حقیقت سامنے آ جائیگی :عمران خان

نواز شریف کرپشن کا گاڈفادر ہے ،جے آئی ٹی میں حقیقت سامنے آ جائیگی :عمران خان

  

ایبٹ آباد (مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہاہے نوازشریف کرپشن کے گاڈفادر اور ملک کے سب سے بڑے ڈاکو ہیں،ان جیسے لوگ کرپٹ افراد کو بچاتے ہیں،حسن نواز لندن میں 6ارب روپے کے گھر میں رہتا ہے۔نواز شریف بتائیں اتنا پیسہ کہاں سے آیا، کیا آپ نے پیتل سے سونا بنانے کا راز سیکھ لیا تھا؟ پاناما کیس کی جے آئی ٹی میں نواز شریف کی اصل دولت سامنے آ جائے گی، جب ہماری حکومت آئی تو چھوٹے چوروں کو نہیں بڑے بڑے مگر مچھوں کو جیل میں ڈالیں گے ، جب تک کرپشن اوپر سے ختم نہیں ہوگی ملک آگے نہیں بڑھ سکتا،ملک کو اصل خطرہ باہر سے نہیں اندر سے ہے ۔اتوار کو جلسہ عام سے خطاب میں انکا مزید کہنا تھا کشمیر کے لوگ آزادی کی جنگ لڑ رہے ہیں، ظلم کیخلاف کھڑے ہیں، کئی سالوں سے بھارتی فورسز کا ظلم سہ رہے ہیں ہم کشمیریوں کے جذبہ کو سلام پیش کرتے ہیں ۔ کشمیر کے سکولوں کی بچیاں بھارتی فوج کے سامنے کھڑی ہیں وہ بھی آزادی مانگ رہی ہیں جب ایک قوم کو شعور آجاتا ہے، سمجھ آجاتی ہے غلامی کیا ہے آزادی کیا ہے تو کبھی بھی اس قوم کو کوئی غلام نہیں بنا سکتا ، جب قوم کے نو جوانوں اور گھر میں رہنے والی ماؤں بہنوں کو احساس ہوجاتا ہے کہ حکمران کرپشن کررہے ہیں تو وہ ان کیخلاف اٹھ کھڑے ہوتے ہیں ، کرپشن روکنے والے عوام ہی ہوتے ،ساؤتھ افریقہ کے عوام سڑکوں پر نکل آئے اور صدر کوجیل میں بھجوا کر دم لیا، آئس لینڈ کے حکمرانوں کیخلاف عوام نکلے باشعور عوام سڑکوں پر نکلے یہی مالٹا کے اندر ہوا ، کرپشن پاکستانیوں کو بیروز گار کررہی ہے ، تعلیم نہیں مل رہی، سرمایہ کاری نہیں آرہی ہے، جب سرمایہ کاری نہیں آئیگی تو روز گار نہیں ملے گا ،13ء کا الیکشن ہوا تو آتے ہی نواز شریف حکومت نے 480ارب روپے گردشی قرضے ادا کئے ، قا ئمہ کمیٹی کی رپورٹ میں انکشاف ہوا کہ اس میں 62ارب روپے کا گھپلا ہوا ، سارے پختونخوا کا بجٹ 110ارب روپے ہے اور ایک ہی خوانچے میں انہوں نے 62ارب چوری کیا،یہی 62ارب تعلیم و ہسپتالوں ،بجلی اور سڑکیں بنانے پر لگ سکتے تھے ،لوڈشیڈ نگ مسئلہ ہے، جب تک حکمرانوں کا احتساب نہیں کر سکیں گے، جیلوں میں نہیں ڈال سکیں گے، کرپشن اوپر سے ختم نہیں ہوگی ملک آگے نہیں بڑھ سکتا اور آپکا کوئی مستقبل نہیں ، ہمارا وزیر اعظم رنگے ہاتھوں پکڑا گیا ،منی لانڈرنگ ،پاناما کیس میں ثابت ہوگئی ہے، منی لانڈرنگ کا مطلب ہے چوری کے پیسے کو باہر بھیجنا ، ایک ہزار ارب روپے ہر سال چوری ہو کر باہر جاتے ہیں جس سے ڈالر کم ہو جاتا ہے اور جب ڈالر کم ہو جاتا ہے تو آئی ایم ایف سے قرضے لیتے ہیں ،نواز شریف کبھی کبھی سچ بھی بول دیتے ہیں،وہ کہہ چکے ہیں کہ کرپشن کرتے ہیں تو اپنے نام پر کچھ نہیں رکھتے ۔ فضل الرحمان کو پیسے نہیں ڈیزل کے پرمٹ چاہیں، جہاں کرپشن ہوتی ہے وہاں عوام غریب ہو جاتی ہے۔ میرا کام ہے آپ میں شعور پیدا کر نا ہے تاکہ آپ اپنے پیسے کی خود حفاظت کر یں۔نواز شریف نے اپنے نام پر کچھ نہیں رکھا سب کچھ اپنے بچوں کے نام پر رکھا ہے ۔ نواز شریف کیوں لوگوں کو پاگل بنارہے ہیں ،تم کرپشن کے بادشاہ ہو، تم کرپشن کے سر دار ہو، تمہارے ارد گرد بڑامافیا ہے اسے تحفظ دے رہے ہو، کرپشن انشاء اللہ ہم روک کر دکھائینگے ،ہم بڑے مگر مچھوں کو پکڑیں گے چور خود ہی بیٹھ جائینگے، نواز شریف کرپشن کا گارڈ فادر ہیں، وزیراعظم ہاؤس سے خبر نکلتی ہے جس میں مودی کی زبان بولی جاتی ہے، اس ملک کو اصل خطرہ باہر سے نہیں اندر سے ہی ہے۔

مزید :

صفحہ اول -