فوجی عدالتوں سے سزائے یافتہ دہشتگردوں کو دنیا کے سامنے لایا جائے :مولانا گوہر شاہ

فوجی عدالتوں سے سزائے یافتہ دہشتگردوں کو دنیا کے سامنے لایا جائے :مولانا ...

  

چارسدہ (بیورو رپورٹ) رکن قومی اسمبلی مولانا سید گوہر شاہ نے مطالبہ کیا ہے کہ فوجی عدالتوں سے سزائے یافتہ دہشت گردوں کو دنیا کے سامنے لایا جائے تاکہ دوسرے دہشت گرد عبرت حاصل کریں۔ مولانا عبدالغفور حیدری پر خود کش حملہ سیکورٹی اداروں کی ناکامی ہے ۔ علماء ، مشائح دہشت گردی کا نشانہ بن رہے ہیں۔ توہین رسالت ﷺ ایکٹ پر عمل در آمد نہ ہونے کی وجہ سے لوگ سڑکوں پر عدالتیں لگا رہے ہیں۔ جے یوآئی آئین اور پارلیمانی نظام کے اندر رہ کر دہشت گردی کے خاتمہ اور نفاذ شریعت پر یقین رکھتی ہے ۔ وہ فاروق اعظم چوک چارسدہ میں سینٹ کے ڈپٹی چےئر مین اور جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی جنرل سیکرٹری مولانا عبدالغفور حیدری پر خود کش حملے کے خلاف احتجاجی ریلی سے خطاب کر رہے تھے ۔ریلی سے سابق رکن قومی اسمبلی مولانا غلام محمد صادق ، جے یوآئی کے ضلعی امیر مولانا محمد ہاشم خان،مولانا ہدایت الحق ، حنیف اللہ حسرت اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔۔ مقررین نے مولانا عبدالغفور حیدری پرمستونگ میں خود کش حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور واقعہ میں ملوث عناصر کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ۔ مقررین نے کہا کہ مولانا عبدالغفور حیدری معتدل انسان ہے ۔ ان پر خود کش حملہ سمجھ سے بالا تر ہے ۔ ریاستی اداروں کی غفلت اور لا پر واہی کی وجہ سے مستونگ میں درجنوں افراد شہید جبکہ متعدد زخمی ہو ئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مولانا فضل الرحمان پر متعدد حملوں کے حوالے سے ابھی تک انکوائری رپورٹ پیش نہیں کی گئی اور نہ ملزمان کے حوالے سے پارٹی کو آگاہ کیا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ علماء اور دینی مدارس دہشت گردوں کے ہٹ لسٹ پر ہیں مگر عجیب روایت ہے کہ علماء اور دینی مدارس کو شک کی نگاہ سے دیکھا جا رہا ہے ۔ ذمہ دار حکام سن لیں کہ دینی مدارس اور علماء کو بری نظر سے دیکھنے والے عناصر کے آنکھیں نکال دینگے ۔ مقررین نے کہا کہ عالمی اجتماع عام میں جمعیت نے پوری دنیا کو امن کا پیغام دیا مگر امن کے پیغمبروں کو دہشت گردی کا نشانہ بنا یا گیا ہے ۔ توہین رسالت ﷺ ایکٹ پر عمل درآمد نہ ہونے کی وجہ سے لو گ سڑکوں پر عدالتیں لگا رہے ہیں جو حکومت کی ناکامی ہے ۔ جے یوآئی آئین ،قانون اور پارلیمانی نظام کے اندر رہ کر ملک سے دہشت گردی ختم کر نے کا عزم کئے ہو ئے ہیں۔ مقررین نے مطالبہ کیا کہ فوجی عدالتوں سے سزائے یافتہ دہشت گردوں کو دنیا کے سامنے لایا جائے تاکہ دوسرے دہشت گرد عبرت حاصل کریں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -