ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے نئے سسٹم کے باعث مسائل جنم لینے لگے

ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے نئے سسٹم کے باعث مسائل جنم لینے لگے

  

ملتان( سٹاف رپورٹر) ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے نئے سسٹم کے باعث پیدا ہونے والے مسائل تاحال حل نہ ہو سکے ‘بتایا گیا ہے کہ یکم جنوری سے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کا نیا سسٹم رائج کیاگیا جبکہ ڈویژنل ڈائریکٹوریٹ آف سکولز کا سسٹم بحال کیا گیا لیکن اس کے ساتھ ہی الجھنیں (بقیہ نمبر35صفحہ7پر )

پیدا ہو گئیں ‘ چیف ایگزیکٹو زڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کے اختیارات کا واضح تعین نہ ہو سکا ‘ ڈویژنل ڈائریکٹرز سکولز کی تعیناتیاں بھی نہ ہو سکیں ‘عارضی طور پر ڈویژنل ہیڈ کوارٹرز میں تعینات سی ای اوز کو ڈویژنل ڈائریکٹر سکولز ( سیکنڈری ) کے عہدے کا اضافی چارج دیا گیا جبکہ ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسرز ( ایلمنٹری ) کو ڈویژنل ڈائریکٹر سکولز( ایلمنٹری )کے عہدے کا عارضی چارج دیا گیا اور یہ عارضی چارج پانچویں ماہ میں بھی چلا آرہا ہے ‘تاحال ڈویژنل ڈائریکٹرز سکولز کو دفتر الاٹ نہیں کئے گئے ‘ ڈنگ ٹپاؤ کام چلایا جارہا ہے ‘ میونسپل اساتذہ کے مسائل بھی دن بدن گھمبیر ہوتے چلے جا رہے ہیں ‘تاحال یہ مسائل حل نہیں ہو سکے ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -