نئی دہلی کے قریب تین افراد نے چلتی کار میں 22 سالہ خاتون کو گینگ ریپ کا نشانہ بنا ڈالا

نئی دہلی کے قریب تین افراد نے چلتی کار میں 22 سالہ خاتون کو گینگ ریپ کا نشانہ ...
نئی دہلی کے قریب تین افراد نے چلتی کار میں 22 سالہ خاتون کو گینگ ریپ کا نشانہ بنا ڈالا

  

نئی دہلی (این این آئی)بھارت کے شہر نئی دہلی کے قریب 3 افراد نے ایک 22 سالہ خاتون کو چلتی کار میں مبینہ طور پر گینگ ریپ کا نشانہ بنایا۔ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق واقعہ گروگرم کے علاقے میں پیش آیا جہاں 3 افراد نے دہلی سے سیکٹر 17 جانے والی ایک خاتون کو مبینہ طور پر اغوا کے بعد کار میں گینگ ریپ کا نشانہ بنایا۔سینئر پولیس افسر نے پریس ٹرسٹ آف انڈیا کو بتایا کہ خاتون اپنی ایک دوست کے ساتھ کناٹ پلیس گئی تھی اور واپسی پر اسے ملزمان نے ایک کار میں مبینہ طور پر اغوا کرلیا۔پولیس نے متاثرہ خاتون کے بیان کے حوالے سے بتایا کہ ملزمان نے اسے اس کے گھر کے قریب سے اغوا کیا اور گینگ ریپ کا نشانہ بنانے کے بعد 20 کلومیٹر دور نجف گڑھ میں سڑک کنارے پھینک دیا۔بعد ازاں خاتون نے ایک راہ گیر کی مدد سے دہلی پولیس تک رسائی حاصل کی۔

پولیس کا کہنا تھا کہ 3 افراد کے خلاف مقدمے کا اندراج کرلیا گیا ہے جن میں سے ایک کو اس کے ساتھی دیپک کے نام سے پکار رہے تھے۔پولیس نے مزید بتایا کہ خاتون کے بیان پر نئی گاڑیوں کی نشاندہی کی گئی ہے جبکہ سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے ملزمان کی شناخت اور تلاش کا کام جاری ہے۔خیال رہے کہ گذشتہ روز ایک 23 سالہ خاتون کی لاش ملی تھی جسے گینگ ریپ کے بعد قتل کردیا گیا تھا، وہ 9 مئی سے لاپتہ تھی۔

واضح رہے کہ جمہوریت کے دعویدار بھارت میں خواتین کا تحفظ تاحال ایک مسئلہ ہے جہاں 16 دسمبر 2012 کو نئی دہلی میں ایک طالبہ کو چلتی بس میں گینگ ریپ کا نشانہ بنایا گیا تھا اور وہ بعد ازاں کئی روز تک ہسپتال میں زیر علاج رہنے کے بعد دم توڑ گئی تھی۔

مزید :

بین الاقوامی -