گھریلوملازم کا ہاتھ کاٹنے کا معاملہ، پنجاب پولیس کی رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش،ملزمہ ضمانت پر، گواہان نے حادثہ قراردیدیا

گھریلوملازم کا ہاتھ کاٹنے کا معاملہ، پنجاب پولیس کی رپورٹ سپریم کورٹ میں ...
گھریلوملازم کا ہاتھ کاٹنے کا معاملہ، پنجاب پولیس کی رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش،ملزمہ ضمانت پر، گواہان نے حادثہ قراردیدیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پنجاب پولیس نے شیخوپورہ میں کم سن گھریلوملازم عرفان کا ہاتھ کاٹنے سے متعلق اپنی ابتدائی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرادی ہے جس میں موقف اپنایا گیا کہ ملزمہ شفقت بی بی نے عبوری ضمانت کرالی تاہم شامل تفتیش ہوگئی جبکہ گواہ شفقت علی اورکرامت نےواقعے کوحادثہ قراردیدیا۔

آئی جی پنجاب کی طرف سے سپریم کورٹ میں جمع کرائی گئی ابتدائی رپورٹ میں بتایاگیاکہ عرفان شفقت بی بی کے گھرجانوروں کی دیکھ بھال کاکام کرتاتھا، 25 اپریل کی صبح 8 بجے ناشتہ مانگنے پرشفقت بی بی بھڑک اٹھی اور عرفان کوٹوکہ مشین کے پاس لےجاکردایاں ہاتھ کاٹ دیا ، ٹوکہ مشین سے خون کے نمونے لیبارٹری بھجوادیے گئے ۔

پولیس نے مزید بتایاکہ مرکزی ملزمہ شامل تفتیش ہے جبکہ شفقت بی بی کے بھائی ظفر تارڑ کوگرفتارکرلیاگیا۔

مزید :

قومی -