نواز شریف کا ریاست مخالف بیان جھوٹ کا پلندہ ہے،عبدالحق اعوان

نواز شریف کا ریاست مخالف بیان جھوٹ کا پلندہ ہے،عبدالحق اعوان

لاہور(پ ر)پاکستان ملت پارٹی کے چیئرمین محمدعبدالحق اعوان نے ممبئی حملوں کے بارے میں سابق وزیراعظم نوازشریف کے ریاست مخالف بیان کومن گھڑت اور جھوٹ کاپلندہ قراردیاہے۔ انہوں نے کہاکہ نوازشریف اتنے سچے ہیں توانہوں نے اس راز کو اپنے چارسالہ وزارتِ عظمیٰ کے دورمیں کیوں چھپائے رکھا۔ انہوں نے کہاکہ نوازشریف نے گمراہ کن انٹرویو دے کر پاکستان اوراس کے حساس اداروں کو بدنام کرنے کی کوشش کی جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔ انہوں نے کہاکہ سابق وزیراعظم کے خلاف اس حوالے سے ہائیکورٹ میں اندراجِ مقدمہ کے لیے دی گئی درخواستوں کی حمایت کرتے ہیں۔ یہ صورتحال افسوسناک ہے کہ نوازشریف نے اپنے ہی ملک کے اداروں کوخنجرگھونپ دیا۔

آج بھارت پاکستان مخالف بیان دینے پر نوازشریف کاشکریہ اداکررہاہے جس کامطلب ہے کہ بلی تھیلے سے باہرآگئی۔ عبدالحق اعوان نے کہاکہ ممبئی حملے بھارت ، اسرائیل اورامریکہ کاگٹھ جوڑتھاجس کامقصدپاکستان کوبدنام کرناتھا ۔ ممبئی حملہ کیس کی تفتیش بھارٹی ہٹ دھرمی کی وجہ سے تعطل کا شکارہوئی۔ انہوں نے کہاکہ شہبازشریف نے نوازشریف کے بیان کو مستردکیاہے۔ انہیں چاہیے کہ اب ان کے خلاف مقدمہ بھی درج کروائیں۔

لوڈشیڈنگ، مہنگائی،بیروزگاری ،لاقانونیت ، رشوت خوری،میرٹ کے برعکس تعیناتیاں اور دہشت گردی جیسے سنگین مسائل جوں کے توں موجودہیں۔

شعبہ ہائے زندگی کے کسی بھی سیکٹر میں بہتری کی کوئی امید نظر نہیں آتی۔حکمرانوں نے سڑکوں کی توڑپھوڑ کانام ترقی رکھ دیاہے۔انہوں نے کہاکہ صوبے کے10کروڑ عوام بے یارومددگار ہیں ان کاکوئی پرسان حال نہیں۔نوجوان اور پڑھے لکھے افراد جرائم کی دلدل میں دھنستے چلے جارہے ہیں۔یوں محسوس ہوتاہے کہ حکمرانوں کو عوامی مشکلات سے کوئی غرض نہیں۔اقرباپروری کے باعث ادارے تباہ حال ہوچکے ہیں۔انہوں نے کہاکہ سرکاری ہسپتالوں کی صورتحال بھی انتہائی ناگفتہ بہ ہے ،مریضوں کابراحال ہے جبکہ لاہور سمیت صوبے بھر کے مختلف علاقوں میں پانی کی قلت کے باعث عوام سراپا احتجاج ہیں۔رہی سہی کسر واپڈا حکام کی جانب سے اووربلنگ نے پوری کردی ہے۔بجلی کی لوڈشیڈنگ پر قابو پانے کے لیے فوری طور پر نئے ڈیم بنانے کی اشد ضرورت ہے۔جب تک چھوٹے بڑے نئے ڈیم بنانے کی طرف توجہ نہیں دی جائے گی اُس وقت تک لوڈشیڈنگ کے بحران سے نمٹانہیں جاسکتا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4