نواز شریف کا انٹرویو قومی سلامتی کے خلاف ہے،بلال مصطفی شیرازی

نواز شریف کا انٹرویو قومی سلامتی کے خلاف ہے،بلال مصطفی شیرازی

لاہور(جنرل رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ ق کے رہنما و مسلم لیگ یوتھ ونگ کے مرکزی صدر سید بلال مصطفی شیرازی نے ممبئی حملوں میں پاکستان کے ملوث ہونے کے نواز شریف کے انٹرویو کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کا انٹرویو قومی سلامتی کے خلاف ہے اور اس سے ملکی وقار مجروح ہوا ۔ انہوں نے کہا کہ ممبئی حملوں میں پاکستان کے ملوث ہونے کے بیان پر نواز شریف کے خلاف غداری کا مقدمہ درج ہونا چاہیے انہوں نے کہا کہ سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں نواز شریف کے بیان پرافواج پاکستان کی طرف سے واضع ردعمل خوش آئند ہے انہوں نے کہا کہ نواز شریف اپنے انٹرویو پر قائم ہیں اور ان کی طرف سے اس کی تردید نہیں کی گئی جبکہ وزیراعظم پاکستان اور وزیراعلیٰ پنجاب کی جانب سے اس کی تردید میں نہ مانوں کی پالیسی اور گناہ از بدتر گناہ ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے مسلم لیگ ہاؤس میں یوتھ ونگ کے عہدیداران و کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔سید بلا ل مصطفی شیرازی نے کہا کہ نواز شریف نیب میں کرپشن کے باعث اپنے خلاف فیصلوں کے قریب آنے پر بوکھلاہٹ کا شکار ہیں اور اپنی کرپشن چھپانے اور کرپشن کے کیسوں سے جان چھڑانے کیلئے غیر ملکی آقاؤں کے اشاروں پر قومی مفادات کے خلاف ہرزہ سرائیوں میں مصروف ہیں انہوں نے ملکی مفادات کے خلاف نواز شریف کے انٹرویو پر چاروں صوبوں کے یوتھ ونگ کے عہدیداران کو احتجاجی تحریک چلانے اور احتجاج مظاہرے کرنے کی ہدایت جاری کردیں انہوں نے کہا کہ نواز شریف کا بیان پوری دنیا میں پاکستان کی بدنامی کا سبب بنا ہے بھارت اس بیان پر پاکستان پر شدید دباؤ بڑھانے کی کوشش کررہا ہے اور اس بیان کو اپنے ناپاک عزائم کیلئے استعمال کررہا ہے جو ملکی سلامتی کے خلاف ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1