ملتان ڈویژن میں کپاس کی کاشت کا صرف10 فیصد ہدف پورا ہو سکا

ملتان ڈویژن میں کپاس کی کاشت کا صرف10 فیصد ہدف پورا ہو سکا

لاہور(این این آئی)ملتان ڈویژن کے اضلاع میں رواں سال کپاس کی کاشت کاصرف دس فیصد ہدف پورا ہو سکا ہے جس سے نہ صرف کاشتکار پریشان ہیں بلکہ روئی کی ایکسپورٹ بھی متاثر ہونے کا امکان ہے۔ملتان ڈویژن کے اضلاع وہاڑی، خانیوال اور لودھراں میں رواں سال کپاس کی کاشت کا ہدف 49لاکھ ایکڑ رقبہ مقرر کیا گیا لیکن محکمہ زراعت کی عدم توجہ اور ہوا میں نمی کا تناسب بڑھنے کے باعث تاحال صرف 9لاکھ80ہزار ایکٹر رقبے پر ہی کپاس کی کاشت مکمل ہو سکی ہے جس سے کاشتکار بھی پریشان ہیں۔کپاس کے زیر کاشت رقبے میں خاطر خواہ کمی کی وجہ سے رواں سال روئی کی برآمد میں بھی واضح کمی کا اندیشہ ہے -محکمہ زراعت کاکہنا ہے کہ کاشتکار رواں ماہ کے آخر تک زیادہ سے زیادہ کپاس کی کاشت کو یقینی بنائیں۔کپاس کی کاشت میں تاخیر سے نہ صرف پیداواری لاگت میں اضافہ ہو گا بلکہ فی ایکڑ اوسط پیداوار میں بھی واضح کمی ہو گی جس سے زراعت کے شعبے کو نقصان پہنچے گا۔

مزید : کامرس