”ایک آدمی گھڑی ٹھیک کروانے دکان پر گیا“ عامر لیاقت نے ٹی وی پروگرام پر فحش لطیفہ سنا دیا، انٹرنیٹ پر وائرل ہو گیا

”ایک آدمی گھڑی ٹھیک کروانے دکان پر گیا“ عامر لیاقت نے ٹی وی پروگرام پر فحش ...
”ایک آدمی گھڑی ٹھیک کروانے دکان پر گیا“ عامر لیاقت نے ٹی وی پروگرام پر فحش لطیفہ سنا دیا، انٹرنیٹ پر وائرل ہو گیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنماءاور مذہبی سکالر ڈاکٹر عامر لیاقت نے رمضان ٹرانسمیشن کے دوران فحش لطیفہ سنایا جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے اور صارفین خاصے غم و غصے کا اظہار کر نے میں مصروف ہیں۔

عامر لیاقت نے رمضان ٹرانسمیشن کے دوران کہا ”ایک شخص دکان پر گیا جہاں کافی ساری گھڑیاں لٹکی ہوتی ہیں، وہاں جا کر دکان والے سے کہا میری گھڑی خراب ہو گئی ہے اسے ٹھیک کر دیں، دکاندار نے جواب دیا ہم گھڑی صحیح نہیں کرتے، ہم تو ختنے کا کام کرتے ہیں، اس شخص نے پوچھا اگر آپ ختنے کا کام کرتے ہیں تو گھڑیاں کیوں لٹکائی ہیں، تو دکاندار نے جواب دیا  کہ پھر آپ بتا دیں کیا لٹکائیں؟؟؟“

افسوسناک امر یہ ہے کہ اس پروگرام میں شریک افراد میں خواتین کی تعداد بھی قابل ذکر تھی اور ڈاکٹر عامر لیاقت جب یہ لطیفہ سنا رہے تھے اس وقت خواتین کو کیمرے میں دکھایا گیا جن کے چہرے سے بیزاری اور شرمندگی صاف عیاں تھی اور یقینا یہ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد سوشل میڈیا پر عامر لیاقت کو آڑے ہاتھوں لیا جا رہا ہے۔

ایک شخص نے لکھا ”قابل نفرت، پیمرا کدھر ہے؟“

ایک صارف نے لکھا ”پیمرا کو نوٹس لینا چاہئے یا پھر چیف جسٹس کو اور اس تیسرے درجے کے شخص پر ہمیشہ کیلئے پابندی عائد کر دینی چاہئے ، یہ بنیادی طور پر ایک مداری ہے۔“

ایک صارف کا کہنا تھا ”خواتین جاتی کیوں ہیں اس کے پروگرام میں؟؟؟

ایک اور صارف نے کہا ”عورتیں لینے کیا جاتیں اس کے پروگرام میں اپنا گھر بار چھوڑ کر اور وہ بھی رمضان میں“

ایک صارف نے لکھا ”رمضان میں شیطان تو قید ہو جاتا ہے لیکن اس جیسے چیلے چھوڑ جاتا ہے“

ایک صارف کا کہنا تھا ”کہتے ہیں کہ روزوں میں شیطان کو بند کیا جاتا ہے، لیکن یہ والا اب تک آزاد ہے“

یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ چند روز قبل ہی یہ افواہیں بھی منظرعام پر آئی تھیں کہ ڈاکٹر عامر لیاقت کو پاکستان ٹیلی ویژن (پی ٹی وی) سے نکال دیا گیا ہے تاہم وہ اس پر نشر ہونے والی ٹرانسمیشن میں اپنی دوسری اہلیہ کے ہمراہ شریک ہوئے اور تمام افواہوں کو غلط ثابت کر دیا اور اب یہ ویڈیو وائرل ہو گئی ہے جس پر ہر کوئی اظہار خیال کرنے میں مصروف ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس