شوگر انڈسٹری کے خلافتحقیقات حکومت کا اہم کارنامہ ہے،ہمایوں اختر

شوگر انڈسٹری کے خلافتحقیقات حکومت کا اہم کارنامہ ہے،ہمایوں اختر

  

لاہور(سٹی رپورٹر)پاکستا ن تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما و سابق وفاقی وزیر ہمایوں اختر خان نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کی وجہ سے ملک میں انتہائی غیر معمولی حالات ہیں جس کی وجہ سے آئندہ مالی سال کا بجٹ انتہائی اہمیت کا حامل ہوگا،صرف پاکستان نہیں بلکہ امریکہ اور برطایہ سمیت دیگر ممالک میں لاک ڈاؤن میں نرمی کرتے ہوئے کاروبار کو کھولا جارہا ہے، تاریخ میں پہلی بار شوگر انڈسٹری سے متعلق تحقیقات ہو رہی ہیں اور اس کا سہرا تحریک انصاف کی حکومت اور وزیر اعظم عمران خان کے سر ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پارٹی رہنماؤں سے ٹیلیفونک گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

ہمایوں اختر خان نے کہا کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے وفاق،تمام صوبائی حکومتیں اور ادارے مشترکہ طور پر فیصلے کررہے ہیں اور ایسا نہیں کہا جا سکتا کہ کسی صوبے کی رائے کا احترام نہیں کیا گیا بلکہ اب تک جتنے بھی فیصلے ہوئے ہیں وہ متفقہ طو رپر کئے گئے ہیں۔ جو لوگ لاک ڈاؤن میں نرمی پر تنقید کر رہے ہیں وہ دنیا کے دیگر ممالک کو بھی دیکھ لیں،صرف پاکستان نہیں بلکہ امریکہ اور برطانیہ سمیت دیگر ممالک معیشت کوچلانے کیلئے لاک ڈاؤن میں نرمی کر رہے ہیں۔ عوام سے اپیل ہے کہ خدارا احتیاطی تدابیر کو ہرگز نظر انداز نہ کریں کیونکہ اگرخلاف ورزی کا سلسلہ جاری رہا تو یقینی طور پر حکومت اپنے فیصلے پر نظر ثانی پر مجبور ہو گی۔ ہمایوں اخترخان نے کہا کہ حکومت موجودہ حالات سے نمٹنے کیلئے ہر ممکن اقدامات اٹھا رہی ہیں لیکن اپوزیشن نے سوائے مایوسی پھیلانے کے اب تک کیا کردار نبھایا ہے؟، یہ ایسا وقت ہے کہ ہمیں یک جان اور یک زبان ہو ناہے لیکن اپوزیشن سمجھتی ہے کہ کڑے وقت میں حکومت کیساتھ کھڑے ہونے سے ان کی سیاست کو نقصان پہنچے گا جو انتہائی غلط اور مفاد پرستی پر مبنی سوچ ہے اورعوام ضرور ایسے لوگوں کا محاسبہ کریں گے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -