سندھ حکومت نے قومی مالیاتی کمیشن مسترد کردیا، ہر فورم پر آواز اٹھانے کا فیصلہ

  سندھ حکومت نے قومی مالیاتی کمیشن مسترد کردیا، ہر فورم پر آواز اٹھانے کا ...

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک) سندھ حکومت نے قومی مالیاتی کمیشن کی تشکیل غیر آئینی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ این ایف سی کے لیے ارکان کا تقرر آئین سے متصادم اور ناقابل قبول ہے۔سندھ حکومت نے اعتراض اٹھایا ہے کہ مشیر خزانہ قومی مالیاتی کمیشن کی صدارت نہیں کر سکتے۔ این ایف سی کی تشکیل نو کے خلاف ہر فورم پر آواز اٹھائیں گے۔ اس سلسلے میں وزیراعظم عمران خان کو بھی خط لکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔خیال رہے کہ صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے گزشتہ دنوں دسویں قومی مالیاتی کمیشن کی تشکیل کر دی تھی۔ وزیر خزانہ دسویں قومی مالیاتی کمیشن کے سربراہ ہوں گے۔ پنجاب سے طارق باجوہ، سندھ سے اسد سعید، بلوچستان سے جاوید جبار اور خیبر پختونخوا سے مشرف رسول ممبر مقرر کر دیئے گئے ہیں۔ وزیر خزانہ کی عدم موجودگی میں مشیر خزانہ کمیشن کی سربراہی کریں گے۔

سندھ حکومت

مزید :

صفحہ اول -