مٹھائی میں بھی زہریلے کیمیکل کا انکشاف‘3دکانیں سیل‘متعدد کو جرمانے

    مٹھائی میں بھی زہریلے کیمیکل کا انکشاف‘3دکانیں سیل‘متعدد کو جرمانے

  

ملتان(سٹاف رپورٹر) سماج دشمن عناصر کھل کھیلنے لگے‘مٹھائی میں بھی زہریلے کیمیکل کا انکشاف‘ 3دکانیں سیل‘ کیمیکل زدہ مٹھائی کینسر سمیت مہلک امراض کا باعث‘بڑی تعداد میں شہری بیماریوں میں گھر گئے‘جعلی دودھ بھی دھڑا دھڑ فروخت‘ مافیا پر آہنی ہاتھ نہ ڈالا جاسکا‘ (بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

کارروائیاں گوالوں تک محدود ہیں‘جنوبی پنجاب میں فوڈ اتھارٹی کی317 فوڈ پوائنٹس کی چیکنگ، 275 کو نوٹس‘19کو جرمانے کردئیے۔تفصیلات کے مطابق فوڈ سیفٹی ٹیمز نے جنوبی پنجاب میں کارروائیاں کرتے ہوئے بہاولنگر میں شاہزیب بیکرز،لیہ میں واقع مرحبا سوئیٹس اینڈ بیکرز،ذیشان سوئیٹس کو سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،مٹھائی میں کیمیکل کے استعمال،پروڈکشن ایریا میں واش روم کی موجودگی،ورکرز کی ذاتی صفائی غیر تسلی بخش ہونے،پراسیسنگ ایریا میں چھپکلیوں کی موجودگی پر سیل کردیا۔ اسی طرح ملتان میں واقع ہاشم گرائنڈنگ یونٹ کو حشرات کی روک تھام کے لیے نامناسب انتظامات کرنے،یونٹ میں چوکر موجود ہونے،تیار شدہ خوراک کی تجزیہ رپورٹ نہ ہونے،لیبلنگ نہ کرنے،آلودہ مشینری نہ ہونے پر مصالحہ جات گرائنڈنگ یونٹ کو سیل کیا جبکہ ڈی جی خان میں واقع یامین اینڈ بردارز پروڈکشن یونٹ کو پروڈکشن ایریا میں گندہ پانی کے کھڑا ہونے،مکڑیوں کے جالے لگے ہونے،ناقابل سراغ کیمیکل کے استعمال پر پروڈکشن یونٹ کو سربمہر کیا گیا۔اس کے علاوہ ملک شاپس سمیت بہاولنگرمیں ناکہ بندی کے دوران دودھ بردار گاڑیوں میں موجود 2878لیٹر دودھ کی چیکنگ، سیمپل فیل ہونے پرمجموعی طور 430لیٹر غیر معیاری دودھ کو تلف کیا گیا۔ لودھراں میں 25دودھ بردار گاڑیوں میں موجود د1668لیٹر دودھ،بہاولنگر میں 13دودھ برادار گاڑیوں میں موجود1100لیٹر دودھ،راجن پور میں ملک شاپس میں 55لیٹر،خانیوال میں 30لیٹر،بہاولپور میں 15لیٹر اورملتان میں ملک شاپ میں موجود10لیٹر دودھ چیک کیا گیا۔ موقع پر لیے گئے دودھ کے سیمپل فیل ہونے پر لودھراں میں 02دودھ فروش گاڑیوں میں موجود80لیٹر،بہاولنگر میں 240لیٹر جبکہ ملتان،بہاولپور،راجنپور اورخانیوال میں مجموعی طور پر110لیٹر دودھ کو موقع پر تلف کردیا گیا۔مزید برآں جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں کارروائی کرتے ہوئے ملتان ڈویژن میں 146فوڈ پوائنٹس کو وزٹ کیا اور136کو وارننگ نوٹسز جاری کیے۔اسی طرح بہاولپورڈویژن میں 96 شاپس کی چیکنگ کی گئی اور86فوڈ پوائنٹس کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے جبکہ ڈی جی خان ڈویژن میں 75شاپس کی چیکنگ کرتے ہوئے53فوڈ پوائنٹس کو حتمی وارننگ نوٹسز جاری کیے۔ ملتان ڈویژن میں 08فوڈپوائنٹس کو 41,500روپے، بہاولپور ڈویژن میں 05شاپس کو48,000 روپے اور ڈی جی خان ڈویژن میں 06 فوڈ یونٹس کومجموعی طورپر26,500 روپے کے جرمانے عائد کیے گئے۔اسی طرح دوران کارروائی انسپیکشن کرتے ہوئے مختلف اضلاع سے 5360مینگوسلائسز،525کلو ٹافیاں،185کلوغیرمعیاری خوراک،13کلو مصالحہ جات کو تلف کیا گیا۔ عوامی و سماجی حلقوں کا کہنا ہے کہ حد ہوگئی ہے کہ مٹھائی میں بھی خطرناک کیمیکل استعمال کئے جا رہے ہیں‘ اس کے علاوہ کیمیکل زدہ جعلی دودھ کی فروخت پر بھی قابو نہیں پایا جاسکا اور کارروائیاں محض گوالوں تک محدود ہیں‘ انہوں نے وزیر اعظم عمران خان سے مطالبہ کیا ہے کہ اس خطرنا ک اور تشویشنا ک صورتحال پر توجہ دی جائے۔

جرمانے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -