وہ ملک جس نے عالمی ادارہ صحت کے سربراہ کو بے دخل کردیا

وہ ملک جس نے عالمی ادارہ صحت کے سربراہ کو بے دخل کردیا
وہ ملک جس نے عالمی ادارہ صحت کے سربراہ کو بے دخل کردیا

  

گٹیکا(ڈیلی پاکستان آن لائن)  مشرقی افریقہ کے ملک برنڈی نےعالمی ادارہ صحت کے ملکی سربراہ اور دیگر تین اہلکاروں کو ملک سے بے دخل کردیاہے۔ یہ فیصلہ ایک ایسے وقت میں سامنے آیاہے جب برنڈی میں بیس مئی کو عام انتخابات کا انعقاد کیاجارہاہے۔

الجزیرہ کی رپورٹ کے مطابق وزارت خارجہ نے عالمی ادارہ صحت کے ملک کے سربراہ والٹر کزادی مولمبو اور ان کی ٹیم کے تین اراکین کو جمعہ تک ملک چھوڑنے کا حکم دیا ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے ملکی سربراہ کی بے دخلی کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی۔

دوسری جانب کورونا وائرس کی وبا کے باوجود برنڈی میں آئندہ ہفتے انتخابات ہونے جارہے ہیں۔ انتخابات کے انعقاد پر اور عالمی ادارہ صحت کے سربراہ اور اراکین کی بے دخلی پر افریقہ میں وبا اور بیماریوں پر قابو پانے کے لیے بنائی گئی تنظیم کے سربراہ جان کینگا سونگ نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح کے فیصلے بدقسمتی ہیں۔

واضح رہے کہ برنڈ ی دس لاکھ کی آبادی والا ملک ہے جہاں کورونا وائرس کے مریضوں کی مجموعی تعداد 27ہے جبکہ ایک شخص ہلاک ہوا ہے تاہم ماہرین کے مطابق اس کی وجہ ٹیسٹ نہ ہونا ہے کیونکہ دس لاکھ آبادی والے اس ملک میں ابھی تک صرف 527ٹیسٹ ہوئے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -