بھارت میں لاک ڈاﺅن ، یہ نوجوان حاملہ بیوی کو ہاتھ سے کھینچنے والی ریڑھی پر بیٹھا کر 700 کلو میٹر پیدل چلا ، اب اس کی بیوی کیسی ہے ؟

بھارت میں لاک ڈاﺅن ، یہ نوجوان حاملہ بیوی کو ہاتھ سے کھینچنے والی ریڑھی پر ...
بھارت میں لاک ڈاﺅن ، یہ نوجوان حاملہ بیوی کو ہاتھ سے کھینچنے والی ریڑھی پر بیٹھا کر 700 کلو میٹر پیدل چلا ، اب اس کی بیوی کیسی ہے ؟

  

ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن )کورونا وائرس کے پیش نظر تقریبا دنیا کے تمام ممالک میں اس وقت کسی نہ کسی صورت میں لاک ڈاون جاری ہے جس کے باعث ہر شخص ہی متاثر ہے لیکن سب سے زیادہ نقصان دیہاڑی دار اور غریب طبقے کا ہواہے۔

ایک ارب تیس کروڑ سے زائد آبادی والے ہمسائے ملک بھارت میں بھی کورونا نے پنجے گاڑنا شروع کر دیئے ہیں ، اتنی بڑی آباد میں لاک ڈا?ن اور پھر بدترین حالات کو سنبھالنا ایک ناممکن کام نظر آتا ہے۔ بھارت سے آئے روز کوئی نہ کوئی ایسی انسانیت سوز ویڈیو یا مناظر دیکھنے کو ضرور ملتے ہیں جوکہ انسانی روح کو شدید تکلیف پہنچتاتے ہیں۔

ایسی ہی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر اس وقت گردش کر رہی ہے جس میں ایک نوجوان ہاتھوں سے کھینچنے والی ریڑھی پر اپنی حاملہ بیوی اور نومولود بیٹی کو لیے حیدرآباد سے اپنے سخت ترین سفر پر نکلتا ہے۔اس کی بیوی کے نام کی شناخت ” دھنوانتا “ اور بیٹی کی شناخت ’ انوراگنی “ کے نام سے ہوئی ہے۔یہ سفر اس نے کوئی بس یا سواری نہ ملنے کے باعث پیدل کرنے کا فیصلہ کیا۔

اس شخص نے اپنی بیوی اور بیٹی لکڑیوں اور کانوں سے بنائی گئی ریڑھی پر بٹھا کر تقریبا 700 کلومیٹر سے زائد کا سفر طے کیا جو سن کر انسانی عقل دنگ رہ جاتی ہے۔اب یہ شخص عوامی توجہ کا مرکز بن گیاہے جس نے اپنے لمبے ترین سفر کی کہانی بھی سنا ڈالی ہے۔

اس شخص کے نام کی شناخت ” رامو“ کے نام سے ہوئی ہے جس نے بتایا کہ ” پہلے میں نے کوشش کی کہ میں اپنی بیوی اور بیٹی کو لے کر پیدل چلوں لیکن یہ بہت مشکل تھا کہ میں اپنی حاملہ بیوی کے ساتھ اتنا لمبا سفر طے کروں ، تاہم میں نے سفر شروع کیا اور راستے میں پڑنے والے جنگل سے لکڑیاں اور تنکے اکھٹے کر کے ہاتھ سے کھینچنے والی ایک ریڑھی بنائی ، اس ریڑھی پر بیوی اور بیٹی کو بٹھا کر حیدرآباد سے بھگت کے علاقے میں لے کر آیا۔

رامو جس طرح ہی اپنی بیوی اور بیٹی کو لیے ریاست مہاشڑا سے ہوتے ہوئے اپنے آبائی ضلع میں داخل ہوا تو پولیس اہلکاروں نے اسے کھانا اور پانی فراہم کیا۔اس پولیس ٹیم کی سربراہی سب ڈویڑنل آفیسر نیتیش بھارگاوا کر رہے تھے۔پولیس کی جانب سے اس شخص اور بیوی بچوں کیلئے میڈیکل چیک اپ کا انتظام کیا گیا جبکہ انہیں ان کے گھر پہنچانے کیلئے سواری کا انتظام کیا اور انہیں ہدایت کی کہ وہ گھر جا کر 14 دن تک قرنطینہ میں رہیں۔

ویڈیو دیکھیں:

مزید :

ڈیلی بائیٹس -بین الاقوامی -