وزیراعظم کی خوشامد میں اسد عمر نے ایسی بات کہہ دی کہ انٹرنیٹ پر ہنسی کا طوفان آ گیا

وزیراعظم کی خوشامد میں اسد عمر نے ایسی بات کہہ دی کہ انٹرنیٹ پر ہنسی کا طوفان ...
وزیراعظم کی خوشامد میں اسد عمر نے ایسی بات کہہ دی کہ انٹرنیٹ پر ہنسی کا طوفان آ گیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )آج کل قومی اسمبلی کا اجلاس جاری ہے جس میں کورونا وائرس سے متعلق حکومت اقدامات اور صورتحال پر بحث جاری ہے تاہم اس دوران بھی اپوزیشن اور حکومتی وزیر ایک دوسرے پر الزامات کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہیں ۔

تقریر کے دوران جہاں اپوزیشن وزیراعظم اور حکومتی پالیسیوں پر تنقید کے تیر برساتی رہی تو وہیں حکومتی وزراءعمران خان کی حمایت میں آگے ڈھال بن کر کھڑے رہے لیکن ایک مقام پر وفاقی وزیر اسد عمر دفاع سے نکل کر کچھ آگے چلے گئے اور خوشامد کی انتہا کو پہنچتے ہوئے ایسی بات کہہ دی کہ سوشل میڈیا پر ہنسی کا طوفان برپا ہو گیا ہے اور ہر طرف مذاق اڑایا جارہاہے ۔

اسد عمر نے قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے ایک جملہ یہ کہا کہ ” دنیا آہستہ آہستہ اب وہاں پہنچ رہی ہے جو وزیراعظم عمران خان کا ویژن تھا “ ۔اس عمر کو یہ خوش آمدی جملہ بہت مہنگا پڑ گیاہے اور سوشل میڈیا پر انہیں ٹرول کیا جارہاہے ۔

اسد عمر کی اس بات پر کالم نگار ندیم فاروق پراچہ بہت حیرت انگیز ہوئے اور ٹویٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ ”پہلے نیو یارک اور اب پوری دنیا ، اگلے ہفتے تک یہ ویژن چاند اور مریخ پر بھی پہنچ جائے گا ، آہستہ آہستہ ۔“

تیمور تالپور نامی نے اسد عمر کے بیان پر نہایت دلچسپ تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ” مارز ، پلوٹو ، نیپچون ، مرکری، کی مخلوق نے بھی عمران خان سے ایس او پیز کی کاپی دریافت کی ہیں ، براوو کیپٹن ، دنیا کو آپ پر فخر ہے ۔“

فیصل نامی صارف نے اسد عمر کی بات پر نہایت پریشانی کے عالم میں الٹا سوال کر دیا کہ ” کیا وہ واقعی اس پر یقین بھی رکھتے ہیں جو وہ بولتے ہیں“

اسد عمر کے بیان پر اپنے رد عمل میں احترام الحق نے اظہار رائے کرتے ہوئے کہا کہ ”مطلب ۔۔ سکون والی جگہ ۔۔ جو صرف قبر ہے ، بجا فرماتے ہیں معاشی ارسطو ۔“

وزیراعظم عمران خان کو اکثر چندہ اور عطیہ مانگنے پر سوشل میڈیا پر طنز کیا جاتاہے اور اسی مد نظر رکھتے ہوئے اس صارف نے اسد عمرکے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ ” کیا ساری دنیا نے کشکول اٹھانے کا فیصلہ کر لیاہے “۔

محمد اقبال نامی صارف نے کہا کہ ” خدرا دنیا پر رحم کروو ، اس ویژن کی پوری دنیا شکار ہو گئی تو پھر کس سے بھیک مانگو گے ۔“

آصف علی نے لکھا کہ ” ما شا ءاللہ ، خوش آمدی کی حد ہے ، اب اسد عمر ، عمران خان کی وہ خوبیاں بتائیں گے جن کا عمران خان اور اسد عمران خان ،دونوں کو پتا ہے کہ وہ سرے سے ان میں موجود ہی نہیں ، خوشا مد آپ کو کھوئی ہوئی وزارت واپس دلا سکتی ہے ۔“

مزید :

قومی -