کورونا وائرس کیخلاف جنگ میں ڈبلیو ایچ او کا کردار،چین کے موقف نے دنیا کو حیران کر دیا

کورونا وائرس کیخلاف جنگ میں ڈبلیو ایچ او کا کردار،چین کے موقف نے دنیا کو ...
کورونا وائرس کیخلاف جنگ میں ڈبلیو ایچ او کا کردار،چین کے موقف نے دنیا کو حیران کر دیا

  

بیجنگ(ڈیلی پاکستان آن لائن)چین عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کیساتھ اپنے تعاون کو اہمیت دیتا ہے اور نوول کرونا وائرس کیخلاف جنگ میں ڈبلیو ایچ او کے اہم کردار کی بھرپور حمایت کرتا ہے۔

یہ بات چین کے شعبہ صحت کے ایک عہدیدار نے  کہی۔قومی صحت کمیشن سے وابستہ لی منگژو نے بیجنگ میں ایک پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ ہم وبا پھیلنے کے بعد سے ہی ڈبلیو ایچ او اور عالمی برادری سے کھلے،شفاف اور ذمہ دارانہ انداز میں وبائی مرض سے متعلق معلومات شیئر کر رہے ہیں۔لی نے کہا کہ چین نے ڈبلیو ایچ او کے ماہرین کے ساتھ تکنیکی تبادلے کیلئے ایک طریقہ کار قائم کیا اور اس طرح کے رابطوں کیلئے متعدد مواقع پر کانفرنسوں کا انعقاد کیا۔انہوں نے کہا کہ ملک نے عالمی ادارہ صحت کے ماہرین کو فیلڈ وزٹ کیلئے بھی مدعو کیا۔ڈبلیو ایچ او کے ماہرین نے 20 سے 21 جنوری تک ووہان کے دوران لیبارٹریوں سمیت طبی سہولت گاہوں کا دورہ کیا اور مقامی ماہرین سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔16سے 24 فروری تک بیجنگ، سیچوان، گوانگ ڈونگ اور ہوبے صوبوں کے دوروں سے ڈبلیو ایچ او۔چین مشترکہ مشن کو چین میں وبا کی صورتحال، ردعمل، طبی علاج اور متعلقہ سائنسی تحقیق اور ترقی کو سمجھنے میں مدد ملی۔اس بے بنیاد الزام کی تردید کرتے ہوئے کہ'' چین نے ووہان میں لیبارٹریوں کو دورہ کرنے کی ڈبلیو ایچ او کی درخواست کو مسترد کر دیا ''لی نے کہا کہ ماہرین نے چین اور پوری دنیا کو وبائی امراض کی روک تھام اور کنٹرول سے متعلق قیمتی اور تعمیری تجاویز پیش کیں۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -