اگلے آرمی چیف کا فیصلہ موجودہ حکومت ہی کریگی:خورشید شاہ

اگلے آرمی چیف کا فیصلہ موجودہ حکومت ہی کریگی:خورشید شاہ

  

        اسلام آباد (این این آئی)پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما اور وفاقی وزیر سید خورشید احمد شاہ نے کہا ہے کہ اگلے آرمی چیف کا فیصلہ موجودہ حکومت ہی کرے گی۔ایک انٹرویومیں وفاقی وزیر نے کہاکہ آرمی چیف کی تعیناتی کے معاملے پر تاحال مشاورت نہیں ہوئی، وزیراعظم اس حوالے سے جون کے بعد مشاورت کریں گے۔انہوں نے کہا کہ آرمی چیف کی مدت ملازمت نومبر میں پوری ہو رہی ہے، دو ماہ پہلے نئے آرمی چیف کی تعیناتی کا فیصلہ کرنا ہوتا ہے اس لیے وہ تو اس حکومت میں ہی ہوگا،نئے آرمی چیف کا فیصلہ جو بھی ہوگا وہ یہی حکومت کرے گی۔انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے ابھی مشاورت نہیں ہوئی، اس میں ابھی وقت ہے جون کے بعد ہی اس پر بات ہوگی،یہ وزیراعظم کا دائرہ اختیار ہے کہ وہ کیا فیصلہ کرتے ہیں، وزیراعظم اتحادیوں سے مشاورت کریں گے لیکن یہ فیصلہ وزیراعظم نے کرنا ہے۔آئندہ انتخابات سے متعلق سوال پر وفاقی وزیر نے کہا کہ عام انتخابات نومبر دسمبر میں ہو جانے چاہیں۔عام انتخابات کب کروانے ہیں اس سے متعلق الکیشن کمیشن سے مشاورت ہوگی کہ وہ کس حد تک تیار ہیں، کچھ ترامیم ہونی ہیں، جو غیر قانونی طریقے سے بل پاس کروائے گئے ہیں ان کو دیکھا جائے گا پھر نئے انتخابات کے حوالے سے فیصلہ کیا جائے گا۔آئندہ عام انتخابات میں اسٹیبلیشمنٹ کے کردار سے متعلق سوال پر خورشید شاہ نے واضح انداز میں موقف اپنایا کہ انتخابات کیلئے مشاورت سیاستدانوں کو خود کرنی چاہیے نہ کہ اسٹیبلیشمنٹ سے نہیں۔خورشید شاہ نے کہا کہ پی ٹی آئی جب اقتدار میں تھی تو یہ کہتے تھے کہ اپنی مدت سے ایک دن بھی کم نہیں گزاریں گے اور آئندہ پانچ سال کیلئے منتخب ہو کر آئیں گے اب کہہ رہے ہیں کہ الیکشن کروائیں۔انہوں نے کہاکہ میں پوچھتا ہوں کہ اپنی تقریر کے 2 منٹ میں 4 سالہ کارکردگی تو بتا دیں کہ انہوں نے ملک کیلئے عوام کیلئے کیا کیا ہے؟ کتنے منصوبے لگائے کتنے قرض واپس کیے۔

خورشید شاہ

مزید :

صفحہ اول -