سپورٹس راؤنڈ اپ

سپورٹس راؤنڈ اپ

  

ارشد ندیم کے لئے کوچ مل گیا

اولمپیئن ایتھلیٹ ارشد ندیم جنوبی افریقا میں ٹریننگ کا پہلا مرحلہ مکمل کرنے کے بعد لاہور واپس پہنچ گئے۔تفصیلات کے مطابق ایتھلیٹکس فیڈریشن نے مستقبل کے انٹرنیشنل ایونٹس میں ارشد ندیم کے لیے غیرملکی کوچ کی خدمات حاصل کرلی ہیں جو ٹاپ جیولن تھرو کوچ ٹرسیس لیبن برگ ارشد ندیم کی اہم ایونٹس میں کوچنگ کریں گے۔جولائی میں شیڈول ورلڈ ایتھلیٹکس چیمپئن شپ کے لیے کچھ روز آرام کے بعد ارشد ندیم دوبارہ ٹریننگ کا آغاز کریں گے جبکہ یاسر علی بھی انکے ہمراہ امام رضا ایتھلیٹکس کپ میں پاکستان کی نمائندگی کریں گے۔واضح رہے کہ ایران شہر مشہد میں ایونٹ میں حصہ لینے کیلئے 7 رکنی پاکستانی دستہ پہنچے گا، ایونٹ 29 سے 30 مئی تک منعقد ہوگا۔

کرسٹیانو رونالڈو  800 گول کرنے والے دنیا کے پہلے فٹبالر

عالمی شہرت یافتہ اسٹار فٹبالر کرسٹیانو رونالڈو کیریئر میں 800 گول کرنے والے دنیا کے پہلے فٹبالر بن گئے۔ کرسٹیانو رونالڈو نے گزشتہ روز  پریمیئر لیگ میں انگلش کلب مانچسٹر یونائیٹڈ کی نمائندگی کرتے ہوئے آرسنل کے خلاف 2 شاندار گول کرکے  کیریئر میں  مجوعی طور پر  800 گول مکمل کیے جس کے بعد وہ  یہ کارنامہ انجام دینے والے دنیا کے پہلے فٹبالر بن گئے۔رونالڈو کے مجموعی  گولز کی تعداد 801 ہوگئی ہے۔کرسٹیانو رونالڈو نے ریال میڈرڈ سے کھیلتے ہوئے  450، مانچسٹر یونائیٹڈ کی جانب سے 130، جووینٹس کے لیے 101 پرتگال کی طرف سے ریکارڈ 115 گول کیے۔جبکہ سب سے زیادہ انٹرنیشنلز گولز 115 کا ریکارڈ بھی کرسٹیانو رونالڈو  کے پاس ہے۔خیال رہے کہ مانچسٹر یونائیٹڈ نے آرسنل کو 2 کے مقابلے میں 3 گول سے شکست دی۔

تاشقند باکسنگ ورلڈ چیمپئن شپ  2023کی میزبانی کرے گا

بین الاقوامی باکسنگ ایسوسی ایشن کے مطابق  2023 مردوں کے بڑے باکسنگ ایونٹ ورلڈ چیمپئن شپ کا انعقاد ازبکستان کے دارالحکومت تاشقند میں ہوگا۔ اے آئی بی اے کے صدر عمر کریملو ف نے ازبکستان کے دورے کے دوران تاشقند کو میزبان شہر کی حیثیت سے تصدیق کردی ہے۔ کریملو ف نے کہا ہے کہ مجھے باکسنگ کے بڑے ایونٹ ورلڈ چیمپئن شپ کا انعقاد ازبکستان کے دارالحکومت تاشقند میں کرانے کا اعلان کرنے پر بہت خوشی ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ ازبکستان  مضبوط باکسر اور باکسنگ چیمپئنز کی خصوصیات رکھنے والا ملک ہے۔جو 2023 میں  ورلڈ باکسنگ چیمپئن شپ کا میزبان ہوگا۔اے آئی بی اے نے کہا کہ ورلڈ چیمپئن شپ کی میزبانی کے لئے باکسنگ فیڈریشن کو ازبکستان کی بھی بولی پیش کی گئی۔

کامن ویلتھ گیمز    بیڈمنٹن ٹیم کا انتخاب

 کامن ویلتھ گیمز کے لیے پاکستان کی چار رکنی بیڈمنٹن ٹیم کا انتخاب کرلیاگیا۔پاکستان کے دو مرد اور دو خواتین کھلاڑی ان گیمز میں ملک کی نمائندگی کریں گی، حتمی ٹیم کا چناؤ لاہور میں دو روزہ ٹرائلز کے بعد کیاگیا۔ ترجمان بیڈمنٹن فیڈریشن کیمطابق ان ٹرائلز میں ملک کے ٹاپ آٹھ لڑکوں اور سات بہترین خواتین کھلاڑیوں نے حصہ لیا۔عمدہ پرفارمنس کا مظاہرہ کرنے والے مراد علی کے ساتھ حافظ عرفان کامن ویلتھ گیمز کیلئے منتخب کیے گئے، ویمنز ایونٹس میں ماہ حور اورغزالہ صدیق پاکستانی دستے کا حصہ ہوں گی۔ظفر تسلیم کوچ اور پرویز بٹ مینیجر کی حیثیت سے ٹیم کے ساتھ روانہ ہوں گے۔پاکستان نمبر ون اولمپیئن بیڈ منٹن پلیئر ماحور شہزاد نے کہاہے کہ کامن ویلتھ گیمز سے قبل ایک طویل کیمپ لگے اور اس کیمپ کیلئے غیر ملکی کوچ کی خدمات بھی حاصل کی جائیں۔کامن ویلتھ گیمز کے لیے ہونے والے ٹرائلز کے موقع پر ایک انٹرویو میں اولمپیئن ماحور شہزاد نے کہا کہ کامن ویلتھ گیمز ایک بڑا ایونٹ ہے، اس میں دنیا کے ٹاپ کلاس پلیئرز حصہ لیتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اس ایونٹ کیلئے گیمز کی بھرپور تیاری کی ضرورت ہوتی ہے، میرا موقف ہے کہ کامن ویلتھ گیمز سے قبل ایک طویل کیمپ درکار ہے۔ماحور شہزاد نے کہا کہ پاکستان کے کوچز بھی اچھے ہیں لیکن ہمیں کیمپ کے لیے ایک غیر ملکی کوچ کی بھی خدمات حاصل کرنی چاہیے، اس سے ہمیں تیاری کا بھی بھرپور موقع ملے گا۔قومی بیڈمنٹن پلیئر نے کہا کہ ہمیں انٹر نیشنل ایکسپوڑر کی ضرورت ہے، ہمیں بین الاقوامی سطح پر کھیلنے کا کم موقع ملتا ہے، ہم آپس میں کھیل کھیل کر خود میں بہتری نہیں لا سکتے۔انہوں نے کہا کہ مہارت حاصل کرنے کے لیے غیر ملکی کھلاڑیوں کے ساتھ کھیلنا ہو گا میں چاہوں گی کہ کامن ویلتھ گیمز سے قبل انٹر نیشنل ٹور بھی ہو اس سے ہمیں بہت فائدہ ہو گا۔ماحور نے کہا کہ کامن ویلتھ گیمز کے لیے بہت پرجوش ہوں، موقع ملا تو میں توقعات پر پورا اترنے کی کوشش کروں گی۔

عامر خان کے شاندار کیئریر کا اختتام

پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان نے عالمی باکسنگ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا ہے۔انہوں نے اپنی ٹویٹ میں لکھا کہ ان کی ریٹائرمنٹ کا وقت آچکا ہے۔انہوں نے مزید لکھا کہ میں 27سالوں پر محیط اپنے شاندار کیریئر پر خود کو خوش قسمت سمجھتا ہوں۔میں ان ٹیموں جن کے ساتھ میں نے کام کیا، اپنے خاندان والوں، دوستوں اور اپنے پرستاروں کا ان کی محبت اور حمایت پر دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔واضح رہے رواں سال فروری میں مانچسٹر میں کیل بروک کے خلاف چھٹے رانڈ میں فائٹ ہارنے کے بعد عامر خان نے باکسنگ سے ریٹائرمنٹ کا عندیہ دیا تھا۔میچ ہارنے کے بعد ان سے ایک رپورٹر نے پوچھا تھا کہ کیا وہ ریٹائرمنٹ کے بارے میں سوچ رہے ہیں؟ اس سوال کا جواب دیتے ہوئے 35سالہ باکسر کا کہنا تھا کہ وہ اس بارے میں سوچ رہے ہیں۔انہوں نے مزید کہا تھا کہ میں نے ہمیشہ کہا ہے کہ میں نہیں چاہتا کہ باکسنگ مجھے ریٹائر کرے، بلکہ میں باکسنگ سے ریٹائر ہوں۔عامر خان کا مزید کہنا تھا کہ میرا خیال ہے میں نے اپنی امید سے زیادہ (کامیابی) حاصل کرلی ہے۔ میں 17 سال کی عمر میں اولمپکس میں تھا، 22 سال کی عمر میں ٹائٹل جیت چکا تھا۔ میں بہت لمبے عرصے سے کھیل میں ہوں، بوڑھا ہوگیا ہوں۔

مزید :

ایڈیشن 1 -