ہیضہ، ہیٹ سٹروک، ہسپتالوں میں ہنگامی اقدامات کا حکم: مانیٹرنگ شروع 

ہیضہ، ہیٹ سٹروک، ہسپتالوں میں ہنگامی اقدامات کا حکم: مانیٹرنگ شروع 

  

ملتان(وقائع نگار)ملتان سمیت جنوبی پنجاب کے میدانی علاقوں میں گرمی کی شدت کی اضافہ اور کھانے پینے میں بے اعتدالی گیسٹرو کے پھیلا کی سب سے بڑی وجہ بن گئی۔ بچوں کے ساتھ ساتھ بڑے بھی اس مرض کی لیپٹ میں ہیں۔جبکہ ہسپتالوں میں بستر کم پڑ گئے۔معلوم ہوا ہے ملتان شہر میں گزشتہ ایک روز میں نشتر سمیت دیگر نجی ہسپتالوں میں تقریبا 269 مریض رپورٹ ہوئے ہیں.جن میں سے 178 مریضوں کو صحت یاب ہونے پر ڈسچارج کر دیا گیا۔جبکہ باقی مریضوں کو بھرپور طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔ان میں 110 مریض نشتر ہسپتال,چلڈرن کمپلیکس میں 90 جبکہ فاطمہ جناح وویمن ہسپتال میں 30 اور دیگر نجی میں 35 مریض داخل ہوئے ہیں۔

ڈیرہ غازیخان(بیورورپورٹ)ڈیرہ غاز یخا ن میں درجہ حرارت 52ڈگری سے بھی بڑھ گیا. وزیر اعلی پنجاب محمد حمزہ شہباز شریف کی ہدایت پر ضلع ڈیرہ غازیخان میں گرمی کی شدت سے پھیلنے والی بیماریوں پر قابو پانے کیلئے مراکز صحت میں ہنگامی بنیاد وں پر اقدامات شروع کر دیئے گئے ہیں. ہسپتالوں کی آوٹ لک کو بہتر کرنے کے ساتھ ڈاکٹرز اور میڈیکل سٹاف کی حاضری کو بھی یقینی بنایاجائے گا. سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر عتیق الرحمن نے بتایاکہ ضلع کے بیشتر علاقوں میں گرمی خطرناک حد تک بڑھ گئی ہے جس سے پانی کی کمی سے ہیٹ سٹروک، ہیضہ پیٹ کی خرابی اوردیگربیماریوں پر قابو پانے کیلئے ضروری ادویات کی وافر مقدار میں دستیابی کو یقینی بنایا جار ہا ہے او رکسی بھی مرکز صحت میں ادویات کی قلت نہیں ہے. سی ای او ہیلتھ نے بتایا کہ اللہ تعالی کا شکر ہے کہ گرمی کی شدت کے باوجود حالات نارمل ہیں تاہم پیٹ کی بیماریوں کے مریض رپورٹ ہو رہے ہیں جس کیلئے ہرممکن طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں. ڈاکٹر عتیق الرحمن نے بتایا کہ ڈپٹی کمشنر ڈیرہ غازیخان محمد حمزہ سالک کی زیر نگرانی ضلع کے تمام ہسپتالوں میں سروس ڈلیوری بہتر کی جار ہی ہے محکمہ صحت نے سپیشل پلان بنایا ہے جس کے تحت تمام افسران کو فیلڈ میں مانیٹرنگ کی ہدایات جاری کی گئی ہیں اور ہر افسرکو تین سے زیادہ مراکز نہیں دیئے گئے تاکہ وہ ہر مرکز صحت کا تفصیلی اور باریک بینی سے جائزہ لے سکیں. مراکز صحت کے معائنہ کے دوران رپورٹ ہونے والی خامیوں کو بھی دور کیاجار ہا ہے.سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر عتیق الرحمن، ڈسٹرکٹ آفیسر ہیلتھ ڈاکٹر احسن اعوان، ڈاکٹر اطہر سکھانی، ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر آئی آر ایم این سی ایچ پروگرام ڈاکٹر تحسین احمد، پراجیکٹ ڈائریکٹر ڈی ایچ ڈی سی ڈاکٹر کامران اصغر، ڈسٹرکٹ منیجر پی ایچ ایف ایم سی ڈاکٹر عابد علی، ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرز ڈاکٹر علی رضا، ڈاکٹر عابد حسین، ڈاکٹر رابعہ رحمن ناصر، ڈاکٹر محمد فہیم اور ایس او آئی آر ایم این سی ایچ پروگرام نوشین زہرانے ٹی ایچ کیو ہسپتال کوٹ چھٹہ، دیہی مراکز صحت وہوا، کوٹ قیصرانی، کالا، شادن لنڈ، شاہ صدر دین، قادر آباد، چوٹی زیریں، سرور والی، بنیادی مراکز صحت عالی والا، غوث آباد، جھوک اترا، ہیرو شرقی، مکول کلاں، سنجرسیداں، گدائی، لوہار والا، معموری، لاکھانی، لتڑہ، پیر عادل، چھابری زیریں، کالا، شادن لنڈ، بکھر واہ، خان پور، میاں پھیرو، نواں شہر، بواٹا، کھرڑ بزدار، حاجی غازی، سمینہ، کھاکھی، ترنمن، نتکانی، مورجھنگی، ریتڑہ، کوٹ ہیبت، یارو، کوٹ مبارک اور سول ہسپتال سخی سرور کا دورہ کیا. ڈاکٹرز اور سٹاف کی حاضری، ادویات کی دستیابی، آلات کی صورتحال اور دیگر معاملات کا جائزہ لیتے ہوئے بہتری کیلئے ہدایات جاری کی گئیں۔

مزید :

صفحہ اول -