’شیخ صاحب! کیا اسلام میں چرس حلال ہے؟‘ سوشل میڈیا پر امریکی عالم دین سے یہ سوال پوچھا گیا تو آگے سے کیا بہترین جواب ملا؟ جان کر آپ اپنی ہنسی روک نہ پائیں گے

’شیخ صاحب! کیا اسلام میں چرس حلال ہے؟‘ سوشل میڈیا پر امریکی عالم دین سے یہ ...
’شیخ صاحب! کیا اسلام میں چرس حلال ہے؟‘ سوشل میڈیا پر امریکی عالم دین سے یہ سوال پوچھا گیا تو آگے سے کیا بہترین جواب ملا؟ جان کر آپ اپنی ہنسی روک نہ پائیں گے

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) یوں تو بے شمار مذہبی سکالر میڈیا کے ذریعے عوام کے سوالات کے جوابات دیتے نظر آتے ہیں لیکن امریکا سے تعلق رکھنے والے مذہبی سکالر شیخ اظہر ناصر کے جوابات نے سوشل میڈیا پر کچھ خاص ہی مقبولیت حاصل کر لی ہے۔اس کی بنیادی وجہ نوجوان نسل سے مخاطب ہونے کا ان کا دلچسپ انداز ہے، جو روایتی علماءکے سنجیدہ انداز سے یکسر مختلف ہے۔

مثال کے طور پر ایک ٹوئٹر صارف نے چرس (جس کے لئے انگریزی زبان کا لفظ weed بھی استعمال ہوتا ہے) کے بارے میں ان سے سوال کیا۔ یہ سوال کچھ یوں تھا ”شیخ صاحب! کیا اسلام میں weed (یعنی چرس) حلال ہے ؟“ شیخ اظہر ناصر نے الفاظ کا دلچسپ ردوبدل کرتے ہوئے جواب دیا ”وہ واحد weed جو اسلام میں حلال ہے اس کا نام tajweed (تجوید) ہے۔ دیکھئے اس کے آخر میں بھی تو weed آتا ہے ۔ہیلو؟ کیا آپ سن رہے ہیں؟“

ان کے دیگر جوابات بھی کچھ ایسے ہی دلچسپ انداز کے حامل ہیں کہ سوشل میڈیا صارفین ان سے لطف اندوز ہوئے بغیر رہ نہیں پاتے۔ ویب سائٹ مینگوباز کی ایک رپورٹ میں کچھ ایسے ہی مزید سوالات و جوابات کا تذکرہ کیا گیا ہے۔ مثال کے طور پر:

سوال: شیخ، میں آپ کو اپنے دوستوں سے ملوانا چاہتا ہوں۔ یہ بلی باب، ایلکس، مائیک اور جیری ہیں۔

جواب: بہت خوشی ہوئی آپ سے مل کر بلال، علی، محمد اور جاسم!

سوال: سب مرد حیوان نہیں ہوتے، کچھ ہوتے ہیں۔ تو کیوں نا انہیں خواتین سے ہاتھ ملانے، گلے لگانے کی اجاز ت دی جائے، اور صرف جرم کرنے والوں کو سزا دی جائے؟

جواب: ہر کوئی چور نہیں ہوتا لیکن اس کے باوجود آپ اپنے گھر کے دروازے کو تالا ضرور لگاتے ہیں۔

سوال: میری والدہ ہر وقت میرے پیچھے پڑی رہتی ہیں۔ وہ 10 بجے کے بعد مجھے گھر سے باہر نہیں جانے دیتیں۔ میں غصے سے تلملارہا ہوں۔

جواب: مجھے یہ دل کو تڑپانے والی کہانی تھوڑی سی اور سنائیے!

مزید : ڈیلی بائیٹس