منشیات ایک لعنت‘ ہماری نسلوں کو تباہ کر رہی ہے: وائس چانسلر

منشیات ایک لعنت‘ ہماری نسلوں کو تباہ کر رہی ہے: وائس چانسلر

  



ملتان (سٹاف رپورٹر) زندگی اللہ تعالی کی امانت ہے اور صحت اللہ تعالی کی بہت بڑی نعمت ہے‘ اس لئے ہمارا اولین فرض ہے کہ ہم اپنی صحت کا خاص خیال رکھیں تاکہ خود کو بیماریوں سے محفوظ رکھ سکیں۔ ان خیالات کا اظہار وائس چانسلر ڈاکٹر عظمی قریشی نے دی ویمن یونیورسٹی ملتان میں شعبہ فارمیسی کے زیراہتمام ایک روزہ بین الاقوامی سیمینار بعنوان "Save use of Drugs"سے خطاب کرتے(بقیہ نمبر29صفحہ12پر)

ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ منشیات ایک ایسی لعنت ہے جو ہماری نسلوں کو تباہ کر رہی ہے یہ ایک بہت بڑا سماجی مسئلہ ہے جو معاشرے میں جرائم کے ساتھ ساتھ انسانی صحت کو بھی بری طرح متاثر کر رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ درسگاہیں علم و دانش کا مرکز ہیں‘ خواتین یونیورسٹی میں شعبہ فارمیسی کا قیام وقت کی اہم ضرورت ہے‘ اس سلسلے میں یونیورسٹی میں ڈرگ فری ویک کا انعقاد کیا جائے گا جس میں طالبات کو منشیات کی روک تھام، ڈرگ فری انوائرنمنٹ کا حصول اس کے فوائد اور اثرات کے حوالے سے آگاہی فراہم کی جائے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ یونیورسٹی میں معیاری تعلیم اور ریسرچ کلچر کے فروغ کے لئے اقدامات اٹھائے جائیں اور جلد ہی فارمیسی”ڈی“ پروگرام کا آغاز بھی کیا جائے گا۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر مسعود بھٹی نے شرکا کو نسخے کے بغیر ادویات کے استعمال ان کی ہینڈلنگ اور نقصانات کے متعلق آگاہی فراہم کی۔ انہوں نے مریض کو تعلیم دینے اور دواؤں کے غلط استعمال سے بچانے کے لئے فارماسسٹ سے رجوع کرنے پر زور دیا۔ سیمینار میں بطور مہمان خصوصی پروفیسر ڈاکٹر عصمت ناز نے شرکت کی۔منتظمین ڈاکٹر رحمانہ رشید، ڈاکٹر رابعہ رزاق، امینہ ریاض، ثنا جاوید اور عظمی ساحر تھیں۔

شعبہ فارمیسی

مزید : ملتان صفحہ آخر