حد بندیاں مکمل، پہلے مرحلے میں دیہات کی سطح پر انتخابات کرائینگے: عثمان بزدار

  حد بندیاں مکمل، پہلے مرحلے میں دیہات کی سطح پر انتخابات کرائینگے: عثمان ...

  



لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا ہے کہ پنجاب حکومت نے لوکل ایریاز کی حد بندیوں کا کام مکمل کر لیا اور پنجاب لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2019 کے تحت الیکشن رولز کی تیاری کا کام جاری ہے، الیکشن قوانین کو دسمبر کے پہلے ہفتے تک مکمل کرکے پہلے مرحلے میں ویلج پنچایت و نیبرہڈ کونسلز کے الیکشن کرائے جائیں گے جبکہ دوسرے مرحلے میں لوکل گورنمنٹس کے انتخابات ہوں گے اور پنجاب بھر میں 455 مقامی حکومتیں بنیں گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اعلیٰ سطحی اجلاس میں کیا،جس میں ویلج پنچایت و نیبرہڈ کونسلز اور لوکل حکومتوں کے انتخابات کے حوالے سے تیاریوں کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں پنجاب میونسپل سروسز پروگرام پر عملدرآمد کیلئے اقدامات پر بھی غور کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ صوبائی کابینہ پنجاب لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2019 میں ترامیم کی منظوری دے چکی ہے جس کے تحت اقلیتوں کو مخصوص نشستوں کے ساتھ جنرل نشستوں پر بھی ووٹنگ کا حق دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ماضی کے بلدیاتی ادارے عوام کے مسائل حل کرنے میں ناکام رہے جبکہ نیا بلدیاتی نظام صوبے کے عوام کی امنگوں اور خواہشات کے عین مطابق ہے اور حقیقی معنوں میں اختیارات کو نچلی سطح پر منتقل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ بلدیاتی نمائندوں کو ذمہ داری کیساتھ بااختیار بنائیں گے اور نیا نظام موجودہ سٹیٹس کو ختم کرے گااورعوام کوبااختیاربنائے گا جبکہ عوام کے مسائل ان کی دہلیز پر حل کرنے کے حوالے سے نیا بلدیاتی نظام اہم کردارادا کرے گا۔دیہات کی سطح پربھی لوگوں کوبااختیاربنائیں گے اور نئے نظام میں بلدیاتی اداروں کو مالیاتی طورپر خود مختار بنائیں گے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ پنجاب میونسپل سروسز پروگرام عوام کے مسائل نچلی سطح پرحل کرنے میں ممدو معاون ثابت ہوگااور اس پروگرام کے تحت مقامی سطح پر سڑکوں کی تعمیر و مرمت اور دیگر فلاح عامہ کے کام ہوں گے۔ وزیراعلیٰ نے پنجاب میونسپل سروسز پروگرام پرعملدرآمد کیلئے امور جلد طے کرنے کی ہدایت کی۔ سیکرٹری لوکل گورنمنٹ نے ویلج پنچایت و نیبرہڈ کونسلز اور لوکل گورنمنٹس کے انتخابات کی تیاریوں کے حوالے سے بریفنگ دی۔ علاوہ ازیں وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے پاورڈویژن کی جانب سے ایک ارب روپے کی لاگت سے ڈیرہ غازی خان کے قبائلی علاقوں کیلئے علیحدہ گرڈ سٹیشن کے منصوبے کیلئے پی سی ون کی تیاری کو احسن اقدام قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ بارتھی خاص میں 132کے وی گرڈ سٹیشن بنایا جائے گااورگرڈ سٹیشن کے ساتھ 132کے وی کی ٹرانسمیشن لائن بھی بچھائی جائے گی۔یہ ٹرانسمیشن لائن 49کلو میٹر طویل ہوگی۔انہوں نے کہا کہ پنجاب کے پسماندہ ترین علاقے بارتھی کے عوام کوترقی کے سفر میں ساتھ لے کر چلیں گے۔گرڈ سٹیشن کے منصوبے کی تکمیل سے قبائلی علاقوں کے عوام کو بجلی کی بلا تعطل فراہمی یقینی بنائی جاسکے گی اوراپنے عوام کیساتھ کیے گئے وعدے پورے کروں گا۔مزیدبرآں وزیراعلیٰ پنجاب سے وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نورالحق قادری نے ایوان وزیراعلیٰ میں ملاقات کی جس میں عمومی صورتحال، مذہبی ہم آہنگی کے فروغ اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو اتحاد و اتفاق کی جتنی ضرورت آج ہے شاید پہلے کبھی نہ تھی۔ پاکستان ہم سب کا سانجھا ملک ہے اور اس کی ترقی و خوشحالی کے سفر کو مل کر طے کرنا ہے۔ قومی مفادات کے سامنے ذاتی مفادات کی کوئی حیثیت نہیں، زندگی کے ہر طبقے نے پاکستان کو آگے لے جانے میں اپنا حصہ ڈالنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کرتار پور راہداری منصوبہ بین المذاہب رواداری کا منہ بولتا ثبوت ہے جبکہ وزیراعظم عمران خان جو کہتے ہیں، وہ کرکے دکھاتے ہیں۔ عمران خان نے راہداری کرتارپور بنا کر دنیا کو امن اور برداشت کا پیغام دیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پنجاب میں مزارات کی دیکھ بھال کے امور میں بہتری لائی جائے گی۔

سردار عثمان بزدار

مزید : صفحہ اول