ٹاؤ ن ون کے بی سی اے میں کمرشل نقشوں کی فائلیں غائب کرنے کا انکشاف

ٹاؤ ن ون کے بی سی اے میں کمرشل نقشوں کی فائلیں غائب کرنے کا انکشاف

  



پشاور(سٹی رپورٹر)ٹاؤن میونسپل ایڈمنسٹریشن (ٹی ایم اے) ٹاؤن ون کے بلڈنگ کنڑول ایجنسی (بی سی اے) میں کمرشل نقشوں کی فائلیں غائب کرنیکاانکشاف ہواہے یہ انکشاف اندرون گنج کے رہائشی نگاہ حسین نے کیاہے انکاکہناہے کہ رمضان المبارک کے مہینے میں بی سے اے چیف بلڈنگ انسپکٹرشہزادکواندرون گنج دوکانوں کے کمرشل نقشے کے ٹائم میں قانونی طریقے سے توسیع کرنے کیلئے نقشہ کی فائل دی تھی جسے کئی ماہ گزرنے کے بعداب سی بی آئی شہزادنے یہ کہہ کربات کورفع دفع کردیاہے کہ آپکی فائل گم ہوگئی ہے انہوں نے الزام لگایاکہ بی سی اے اہلکاران سے نقشہ کی مدت میں توسیع کرنے  کیلئے پیسوں کاتقاضاکررہے ہیں لہذاپیسے نہ دینے پرانہوں نے انکی فائل غائب کردی ہے انہوں نے کہاکہ بی سی اے میں مالی بدعنوانیوں اوراقرباپروری کابازارگرم ہے چنانچہ چمک دکھانے والے افرادکاکام گھنٹوں میں جب کے قانونی طریقے سے آنے والے افرادکی فائلیں غائب کردی جاتی ہے یہاں یہ امرقابل ذکرہے کہ اس سے قبل بھی کئی باربی سی اے برانچ میں نقشوں کی فائلیں اوربغیرنقشہ تعمیرات کرنیوالوں کیخلاف علاقہ مکینوں کی جانب سے شکایاتی درخواستیں غائب ہوچکی ہیں جس پراس وقت کے ٹاؤن میونسپل آفیسر(ٹی ایم او)نے بی سی اے انچارچ کی سرزنش بھی کی تھی لہذٰابی سی اے برانچ میں من پسندکام نہ ہونے پرفائلیں غائب ہونے کاسلسلہ تاحال رک نہیں سکاہے۔   

مزید : پشاورصفحہ آخر