پنجاب حکومت نے فضائی آلودگی ختم اور صفائی کا نظام بہتر بنانے کے لئے بڑا اعلان کر دیا

پنجاب حکومت نے فضائی آلودگی ختم اور صفائی کا نظام بہتر بنانے کے لئے بڑا ...
پنجاب حکومت نے فضائی آلودگی ختم اور صفائی کا نظام بہتر بنانے کے لئے بڑا اعلان کر دیا

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) پنجاب کے صوبائی وزرا ء نے ٹرانسپورٹ، انڈسٹری اور ایگریکلچر سیکٹرز کو آلودگی کا سبب قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ پورے خطے میں آلودگی کی وبا ء ہے، ہمسایہ ملک میں جلا کی وجہ سے پاکستان میں سموگ آئی ہے، ہمیں ایئر کوالٹی کو بہتر بنانا ہوگا، حکومت ایئرکوالٹی بنانے کے لیے 40 ارب روپے خرچ کرے گی،ہم لاہور کو ایک مرتبہ پھر صاف ستھرا اور ہرا بھرا شہر بنائیں گے۔

صوبائی وزیر خزانہ وزیر خزانہ مخدوم ہاشم جواں بخت اور وزیر اطلاعات میاں اسلم اقبال نے ڈی جی پی آر میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاہے کہ حکومت نے فیصلے کیے ہیں کہ لاہور سمیت پورے پنجاب میں بطور خاص وہ درخت لگائے جائیں گے جو زیادہ آکسیجن پیدا کرتے ہیں، بسوں کو ٹھیک کیا جائے گا، پبلک ٹرانسپورٹ میں بہتری لائی جائے گی اور صوبے میں نیا ٹریفک مینجمنٹ منصوبہ بنا کر اس پر عمل درآمد کو یقینی بنایا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے چھوٹے بچوں کی صحت میں بہتری لانے کے لیے بھی متعدد اہم فیصلے کیے ہیں ماحولیاتی آلودگی کے خاتمے کے لیے پنجاب میں الیکٹریکل وہیکل پالیسی کو اپنا یا جائے گا اور صنعتوں میں بھی الیکٹریکل وہیکل کو فروغ دیں گے۔ انہوں نے واضح کیا کہ عوام الناس کو آگاہی دلانے کے لیے بھرپور مہم چلائی جائے گی، عوام کے تعاون کے بغیر آلودگی پر قابو پانا مشکل ہے۔ انہوں نے اعلان کیا کہ 31 دسمبر 2020 تک تمام بھٹوں کو زگ زیگ ٹیکنالوجی پر منتقل کردیں گے،ہم ایئر کوالٹی کے انڈیکس کو بہتر بنانے کے لیے قانون سازی کریں گے اور حکومت آلودگی کے خاتمے میں اپنا بھرپور کردار ادا کرے گی، گزشتہ سال دو لاکھ درخت لگائے گئے تھے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور