ریونیو بورڈسیٹلمنٹ" کے کام کےلئے بھرتی سینکڑوں پٹواری بنیادی کاموں سے غافل

ریونیو بورڈسیٹلمنٹ" کے کام کےلئے بھرتی سینکڑوں پٹواری بنیادی کاموں سے غافل

  

لاہور(عامر بٹ سے)بورڈ آف ریونیو کے شعبہ سیٹلمنٹ میں"سیٹلمنٹ" کے کام کےلئے بھرتی کئے جانے والے سینکڑوں پٹواری اپنے بنیادی کاموں سے غافل ہوگئے ،پنجاب حکومت کے خزانے سے تنخواہوں اور دیگر الاﺅنس کی مد میں وصول کی جانے والی لاکھوں روپے کی رقوم بھی بدنیتی کی بھینٹ چڑھ گئی ،ڈسٹرکٹ سیٹملنٹ آفیسر لاہور 1سال کاعرصہ گزرجانے بعد بھی شعبہ سیٹلمنٹ کے ان پٹواریوں کی فہرست مرتب نہیں کر پائے جو کہ دس ،دس سالوں سے محکمہ میں بندوبست کی آڑ میں تنخواہیں وصول کرنے میں مصروف ہیں مگرآج تک کسی ایک بھی موضع سیٹلمنٹ کاکام مکمل نہیں کر پائے ،روزنامہ پاکستان کوملنے والی معلومات کے مطابق 2002سے لیکر 2914 تک شعبہ سیٹلمنٹ کے کام کی غرض سے بھرتی ہونےوالے سینکڑوں پٹواری پنجاب حکومت کے خزانے پر بھاری پڑنے لگے ،دس دس سال کا عرصہ گزر جانے کے بعد شعبہ سیٹلمنٹ کے22 بندوبستی پٹواری اےسے بھی ہےں جو کہ ایم پی اے،ایم این اے اور اپنے دیگر سفارشی ،بیوروکریٹس کی بدولت کام کرتے آئے ہےں دوسری جانب ریونیو ماہرین نے ڈائریکٹر اےنٹی کرپشن لاہورطارق محمود اور ڈی جی اےنٹی کرپشن پنجاب انور رشید سے اپیل کی ہے کہ وہ شعبہ سیٹلمنٹ کے ان پٹواریوں کی فوری جانچ پڑتال کروائیں

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -