جونیئر افسر کو بلڈنگ انسپکٹر بنانے کیخلاف درخواست سماعت کیلئے منظور

جونیئر افسر کو بلڈنگ انسپکٹر بنانے کیخلاف درخواست سماعت کیلئے منظور

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے ڈی سی او کیپٹن ریٹائرڈ محمد عثمان کی طرف سے گریڈ 11کے جونیئر افسر کو گلبرگ ٹاﺅن میں گریڈ چودہ کی اسامی پر بطور بلڈنگ انسپکٹر تعینات کرنے کیخلاف درخواست ابتدائی سماعت کیلئے منظور کر تے ہوئے اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل کو آئندہ سماعت پر ڈی سی او سے ہدایت لے کر پیش ہونے کا حکم دیدیا۔ لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس شمس محمود مرزا نے نشتر ٹاﺅن کے بلڈنگ انسپکٹر محمد عارف کی درخواست پر سماعت شروع کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ ڈی سی او لاہور کیپٹن (ر)محمد عثمان نے تیس ستمبر کو انہیں نشتر ٹاﺅن سے تبدیل کر کے گلبر گ ٹاﺅن میں تعینات کیا مگر بلاوجہ بتائے انکا تبادلہ منسوخ کر دیا گیا ، درخواست گزار کے مطابق ڈی سی او نے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے گریڈ گیارہ کے سب انجینئر امین ملک کو گلبرگ ٹاﺅن میں بلڈنگ انسپکٹر تعینات کر دیا، درخواست گزار نے استدعا کی کہ انکے تبادلے کی منسوخ کا حکم کالعدم کرتے ہوئے گلبرگ ٹاﺅن میں بطور بلڈنگ انسپکٹر کام کرنے کا حکم دیا جائے اور سب انجینئر امین ملک کی گلبرگ ٹاﺅن میں بطور بلڈنگ انسپکٹر تعیناتی بھی کالعدم کی جائے۔درخواست میں یہ بھی استدعا کہ گئی ہے کہ ہائیکورٹ ڈی سواو لاہور سے اختیارات سے تجاوز کرنے اور جونیئر افسر کو گریڈ چودہ کی آسامی پر تعینات کرنے کے حوالے سے وضاحت بھی طلب کرے، عدالت نے درخواست سماعت کیلئے منظور کرتے ہوئے اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل کو سترہ نومبر کو ڈی سی او لاہور سے ہدایت لے کر پیش ہونے کا حکم دیدیا

منظور

مزید :

صفحہ آخر -