پولیس نے گھر میں گھس کر نوجوان کو اٹھا لیا رہائی کیلئے 5 لاکھ کا مطالبہ

پولیس نے گھر میں گھس کر نوجوان کو اٹھا لیا رہائی کیلئے 5 لاکھ کا مطالبہ

  

لاہور( کر ائم سیل)چھ روز قبل خانیوال پولیس گھر میں زبردستی گھس آئی دروازہ توڑ کر چھوٹے بھائی کو اسلحہ کے زور پر اٹھا کر تھانے لے گئی اسکی رہائی کیلئے پولیس نے پانچ لاکھ کا مطالبہ کیا اور دھمکیاں دیں کہ اگر کسی کو بتایا تو انجام اچھا نہیں ہوگا ۔یہ باتیں کبیروالا کے رہائشی محمدمالک نے گذشتہ روز لاہور پریس کلب میں پریس کانفرنس کے دوران بتائیں سائل نے الزام عائد کیا ہے کہ چند روز قبل ایس ایچ او خانیوال رانا فاروق پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ گھر میں گھس آیا۔ جہاں پولیس والے چھوٹے بھائی خالق کو اغوا کرکے تھانے لے گئے جہاں اسے تشدد کا نشانہ بنایا۔ وجہ معلوم کی تو تفتیشی افسر فیاض نے بتایا لین دین کا معاملہ ہے مدعی کی ایماء پر خالق کو لیکر تھانہ لیکر آئے ہیں اور اگر بھائی کی رہائی چاہتے ہوتو پانچ لاکھ روپے کا بندوبست کرو۔ سائل نے بتایا کہ جب اس سلسلہ میں عدالت سے رجوع کیا تو پولیس نے بھائی خالق کو نامعلوم مقام پر محبوس کردیا ہے اور ملاقات بھی نہیں کروائی جا رہی ہے ۔سائل نے اعلی حکام سے اپیل کی ہے کہ اس کے بھائی کو پولیس سے آزاد کروایا جائے جبکہ بھائی کے خلاف کوئی مقدمہ وغیرہ درج نہ ہے ۔پریس کانفرنس کے بعد مغوی کے لواحقین نے پولیس کے خلاف پریس کلب کے باہر احتجاج بھی کیا اور نعرے بازی کی ۔

مزید :

علاقائی -