دنیا کے انوکھے ترین نشئی کا کامیاب علاج

دنیا کے انوکھے ترین نشئی کا کامیاب علاج
دنیا کے انوکھے ترین نشئی کا کامیاب علاج

  

سان فرانسسکو (نیوز ڈیسک) ہیروئن، شراب اور افیون جیسے نشوں کے بارے میں تو آپ نے سنا ہوگا لیکن تاریخ میں پہلی دفعہ گوگل گلاس نامی جدید ٹیکنالوجی کے حامل چشمے کا نشے کی حد تک عادی ہوجانے والا شخص بھی سامنے آگیا ہے اور ڈاکٹروں کو اس بیماری کا علاج کرنے میں ایک مہینے سے زائد کا عرصہ لگا ہے۔ متاثرہ شخص کی عمر 31 سال ہے اور وہ امریکی بحریہ کا اہلکار ہے۔ یہ شخص روزانہ 18گھنٹے تک یہ چشمہ لگائے رکھتا جس کے عدسوں میں کمپیوٹر کی سکرین کی طرح تصاویر اور ویڈیوز نظر آتی ہیں اور انٹرنیٹ بھی اس کے ذریعے استعمال ہوسکتا ہے۔ اس شخص کو نیند میں خواب بھی ایسے نظر آتے تھے گویا کہ وہ گوگل گلاس کے عدسوں میں تصاویر دیکھ رہا ہو اور چشمہ اتارنے پر وہ سخت بدمزاجی اور تناﺅ کا شکار ہوجاتا تھا۔ ڈاکٹروں نے 35 روز تک اس کا علاج جاری رکھا اور اب اس کی حالت بہتر بتائی جاتی ہے۔

مزید :

تعلیم و صحت -