ہال روڈ پر بے ہنگم پارکنگ، ٹریفک جام معمول ، تاجر سراپا احتجاج

ہال روڈ پر بے ہنگم پارکنگ، ٹریفک جام معمول ، تاجر سراپا احتجاج

  

لاہور (جنرل رپورٹر) ہال روڈ پر گھنٹوں ٹریفک جام رہنے سے شہریوں نے خریداری کیلئے ہال روڈ پر آنا چھوڑ دیا، تاجروں کے کروڑوں روپے کے کاروبار تباہ ہو گئے تفصیلات کے مطابق ہال روڈ کے تاجروں نے کروڑوں روپے کی سرمایہ کاری کر کے کاروبار شروع کئے ، اور ملک بھر سے الیکٹرونکس اشیاء کی خریداری کیلئے لوگ ہال روڈ کا رخ کرتے تھے ،شروع سے ہی پارکنگ کا نظام انجمن تاجران الیکٹرونکس ہال روڈ لنک میکلوڈ روڈ انتظامیہ کے پاس تھا جو سڑک پر صرف ایک قطار میں پارکنگ کرواتے تھے تا کہ ٹریفک جام نہ ہو مگر جب سے ضلعی حکومت نے ہال روڈ کی پارکنگ کا ٹھیکہ ایک کمپنی کے سپرد کیا ہے اس وقت سے مسائل پیدا ہو رہے ہیں، سڑک کے دونوں اطراف موٹر سائیکلوں کی پارکنگ کی پانچ پانچ قطاریں لگوا دی گئی ہیں جس کی وجہ سے اگر کوئی خریدار ہال روڈ کا رخ کر لے تو وہ گھنٹوں ٹریفک جام میں پھنسا رہتا ہے اور پھر پارکنگ نہ ملنے کی وجہ سے بغیر خریداری ہی واپس لوٹ جاتا ہے جس کی وجہ سے کروڑوں کی سرمایہ کاری کرنے والے تاجروں کے کاروبار تباہ ہو گئے ہیں، انجمن تاجران الیکٹرونکس ہال روڈ لنک میکلوڈ روڈ کے صدر محمد شبیر لبھا ، جنرل سیکرٹری بابر علی خان، ملک خالد اقبال، ثاقب ملک، حاجی نواز پپو ، چودھری جمشید ، مظہر امین بٹ، آصف محمود بٹ، محمد سعید ، افضال صدیقی، محمد نذیر ، اکبر شاہ اور دیگر تاجروں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ ضلعی حکومت ہال روڈ کی پارکنگ کا نظام کہیں اور منتقل کرے۔ اگر انتظامیہ نے فوری طور پر ہال روڈ کی پارکنگ کا نظام درست نہ کیا تو تاجر راست اقدام اٹھانے پر مجبور ہو جائینگے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -