انٹرنتائج میں مبینہ بے ضابطگیوں کیخلاف طلبہ کے احتجاجی مظاہرے، دھرنے، روڈ بلاک

انٹرنتائج میں مبینہ بے ضابطگیوں کیخلاف طلبہ کے احتجاجی مظاہرے، دھرنے، روڈ ...

  

ملتان ، لودھراں ، رحیم یارخان ، ڈیرہ غازی خان(سٹاف رپورٹر228نمائندگان)انٹر میڈیٹ کے نتائج میں مبینہ بے ضابطگیوں کے حوالے سے ملتان، بہاولپور اورڈیرہ بورڈ کیخلاف طلبہ سڑکوں پرنکل آئے روڈ بلاک گاڑیوں کی لمبی لائنیں لگ گئیں۔تعلیمی بورڈ ملتان کے حکام کے خلاف طلبا نے پریس کلب ملتان کے باہرحتجاجی مظاہرہ کیا‘ اس موقع پر طلبانے الزام عائد کیا کہ فرسٹ ایئر کے پیپرز کی چیکنگ میں بے شمار غلطیاں ہیں‘پیپرز کی ری چیکنگ کرائی جائے ‘پیپرزکی چیکنگ میں مبینہ غفلت برتی گئی ہے جس کی وجہ سے اْن کے نمبرز کم آئے ہیں‘ انہوں نے کہا کہ پیپرز چیک کرنے والے اساتذہ کی مبینہ لاپروائی کے باعث اْن(بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

کا مستقبل داؤ پر لگ گیا ہے‘انہوں نے مطالبہ کیا کہ اعلیٰ حکام فوری نوٹس لیں اور کارروائی کا حکم دیں ‘اس بار ے میں بورڈ ترجمان کا کہنا ہے کہ اس سلسلے میں قانون موجود ہے‘ طلبا ری چیکنگ کی درخواست جمع کرائیں‘ ان کے اعتراضات کو دور کردیا جائیگا ۔ لودھراں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق جمعہ کے روز 12بجے کے بعد لودھراں کے پرائیوٹ کالجز کے طلباء نے ملتان بہاولپور موٹر وے روڈ بلاک کردیا ۔ 3گھنٹے تقریباً روڈ بند رہنے سے ٹریفک بند اور گاڑیوں کی لمبی لائینیں لگ گئیں طلباء کا کہنا تھا کہ فرسٹ ائیر کے پیپر درست چیک نہیں کیے گئے میٹرک پاس لوگوں نے پیپر چیک کیے ہیں اور بعض پیپروں میں 100میں سے 103نمبر دے دیئے گئے ہیں اور جن طلباء نے ریگولر پیپر دیے ہیں ان کو غیر حاضر کردیا گیا ہے اور جن طلباء نے پیپر نہیں دیئے انہیں پاس کردیا گیا ہے ۔ طلباء کا مطالبہ تھا کہ بورڈ چیئرمین تمام پیپرز کو دوبارہ چیک کرنے کا حکم دیں تب ہم روڈ سے دھرنا ختم کریں گے۔ اس اثنا میں ممبر صوبائی اسمبلی پیر عامر اقبال شاہ موقع پر پہنچ گئے ۔ انہوں نے طلباء سے مذاکرات کیے ۔ لیکن طلباء نے اسرار کیا کہ چیئرمین بورڈ میڈیا پر آکر پیپروں کی ری چیکنگ کا اعلان کریں تب ہی روڈ کھولا جائے گا۔ پیر عامر اقبال شاہ اور اسسٹنٹ کمشنر لودھراں نے طلباء کو مزید روڈ بند رکھنے سے باز رکھا اور کامیاب مذاکرات کرکے 3گھنٹے سے بند موٹر وے روڈ کو ٹرانسپورٹ کے لیے بحال کروادیا ۔ ممبر صوبائی اسمبلی پیر عامر اقبال شاہ نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چیئرمین بورڈ سے بات ہوگئی ہے انہوں نے کہا کہ طلباء اپنی ری چیکنگ کی درخواست دیں جس پر طلباء کے ساتھ انصاف کیا جائے گا۔رحیم یارخان سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق بورڈ آف انٹر میڈیٹ بہاولپور کی جانب سے ایف ایس سی پارٹ ون کے نتائج کے خلاف سرکاری وپرائیویٹ کالجز کے سینکڑوں طلبہ نے ڈی سی او آفس کے باہر احتجاج دھرنا دیا طلبہ کا مطالبہ تھا کہ بورڈ آف انٹر میڈیٹ بہاولپور کی جانب سے پرچوں کی چیکنگ کا معیار انتہائی غیر معیاری رکھاگیا ہے جس کے نتیجہ میں سینکڑوں طلبہ کی جانب سے دیئے جانے والے پرچوں میں نمبر انتہائی غیر معیاری دیئے گئے ہیں۔ڈیرہ غازی خان سے نمائندہ خصوصی کے مطابق انٹر میڈیٹ کے نتائج میں بے ضابطگیوں کیخلاف مختلف تعلیمی اداروں میں زیر تعلیم طلباء نے بورڈ آفس کے سامنے احتجاج کیا ، اس موقع پر مظاہرین نے اپنے ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے جن پر ان کے مطالبا ت درج تھے سینکڑوں مشتعل طلباء نے ملتان روڈ پر دھرنا دیا اور شاہراہ کو ٹریفک کیلئے مکمل طور پر بند کردیا، احتجاج کے باعث شاہراہ کے دونوں اطراف کئی کلو میٹر تک گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں ، مظاہرے میں شریک طلباء نے تعلیمی بورڈانتظامیہ کیخلاف شدید نعرہ بازی کر کے اپنے غم و غصہ کا اظہار کیا اور بورڈ انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ نتائج پر عدم اعتماد کرتے ہوئے انٹر میڈیٹ پارٹ فسٹ کے نتائج دوبارہ مرتب کرنے کا مطالبہ کیا ، نتائج کو درست قرار دیا اور دو رولنمبرز کے نتائج میں ہونیوالی ٹیکنیکل غلطیوں کو تسلیم کرتے ہوئے ذمہ دار اہلکاروں کیخلاف انکوائری کا حکم دیدیاانہوں نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ غفلت کے مرتکب دو اہلکاروں جن میں ریاض احمد اسسٹنٹ کنٹرولر سنٹر اور پروگرامر طیب رضا شامل ہیں کو معطل بھی کر دیا گیا ہے ، جن کے خلاف انکوائری رپورٹ کی روشنی میں کاروائی کی جائیگی ۔دریں اثنائانٹر میڈیٹ کے نتائج میں بے ضابطگیوں کے خلاف احتجاج ،طلباء کو مخصوص پیپرز کی ری چیکنگ کی پیش کش ، فیس وصولی نہ کرنے کیلئے معاملہ BOG میں رکھیں گے ، BOGکے فیصلے کے مطابق بورڈ انتظامیہ پابندی کریگی ، ڈیرہ بورڈ کے ترجمان نے "پاکستان ‘‘کو بتایا کہ طلباء کے احتجاج پر بورڈ انتظامیہ کی طرف سے ان تمام سٹوڈنٹس کو یہ پیش کش کی گئی ہے کہ وہ اپنے اپنے مخصوص پیپر کی چیکنگ کے لئے اپلائی کریں تمام ریکارڈ ان کے سامنے چیک کیا جائیگا تاہم سٹونڈنٹس اپنی جوابی کاپی بھی چیک کریں انہوں نے مزید کہا کہ اس دوران بورڈ انتظامیہ نے یہ بھی طے کیا ہے چونکہ بورڈ کمیٹی آف چئیرمین (PBCC)بھی ان معاملات کو دیکھ رہی ہے اس دوران ان کی طرف سے آنے والے فیصلے کی بھی پاسداری کی جائیگی ، انہو ں نے مزید بتایا کہ ڈی جی خان میں دو طلباء کو مقررہ نمبر زسے زیادہ مارکس دیئے جانے کی انکوائری دو سینئر پروفیسرز سے کرائی جارہی ہے جن میں گورنمنٹ کالج آف کامرس کے پرنسپل سجاد حسین اور گورنمنٹ کالج آف ٹیکنالوجی کے پروفیسر وسیم چشتی شامل ہیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -