’میری بیوی کا کام بس اتنا ہے کہ وہ۔۔۔‘ بڑے ملک کے سربراہ نے ایسا بیان دے دیا کہ دنیا میں ہنگامہ ہو گیا، خواتین احتجاج کرنے لگیں

’میری بیوی کا کام بس اتنا ہے کہ وہ۔۔۔‘ بڑے ملک کے سربراہ نے ایسا بیان دے دیا ...
’میری بیوی کا کام بس اتنا ہے کہ وہ۔۔۔‘ بڑے ملک کے سربراہ نے ایسا بیان دے دیا کہ دنیا میں ہنگامہ ہو گیا، خواتین احتجاج کرنے لگیں

  

ابوجہ (نیوز ڈیسک) نائیجیریا کے صدر محمدوبوہاری نے اپنی بیوی کی تنقید سے تنگ آکر ان کے بارے میں میڈیا میں ایک ایسی بات کہہ دی کہ جس پر ملک میں ہنگامہ برپا ہو گیا ہے۔ غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق نائیجیرین صدر کی اہلیہ عائشہ بوہاری نے بی بی سی کو دئیے گئے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ اگر ان کے شوہر اپنی حکومت میں اہم تبدیلیاں نہیں کرتے تو وہ اگلے الیکشن میں ان کی حمایت نہیں کریں گی۔ محمدوبوہاری سے جب ان کی اہلیہ کے اس بیان کے متعلق سوال کیا گیا تو انہوں نے ازراہ تفنن کہا ”مجھے نہیں معلوم کہ میری اہلیہ کا تعلق کس پارٹی سے ہے۔ دراصل ان کا کام باورچی خانے، رہائشی کمرے اور میرے گھر کے دیگر کمروں تک محدود ہے۔“

’اگر اسلامی شدت پسند ہوتی تو یہ شرمناک چیز ساتھ نہ لاتی‘ گھر سے بھاگ کر شام جانے والی روسی لڑکی نے عدالت میں ایسی بات کہہ دی کہ جج بھی حیران پریشان رہ گیا

ان کے اس بیان پر آزادی نسواں کے حامی غصے سے آگ بگولا ہو گئے ہیں۔ ملک کے کئی نامور دانشوروں اور انسانی حقوق کارکنوں نے ان کے بیان کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ خوتین اور مردوں کو غیر مساوی سمجھنا اور خواتین کو مردوں کے برعکس صرف گھر تک محدود رکھنے کی بات کرنا ملک کے صدر کے شایان شان نہیں ہے ۔ اگرچہ نائیجیرین صدر کے حامیوں کا کہنا ہے کہ انہوں نے محض ازراہ تفنن یہ بات کہی لیکن میڈیا کے آزاد خیال طبقات اور دانشور ان کے بیان کو انتہائی غیر ذمہ دارانہ اور خواتین کے لئے ہتک آمیز قرار دیتے ہوئے انہیں معاف کرنے پر تیار نظر نہیں آتے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -