محض باتوں اور مذمت کی قراردادوں سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوگا: سینیٹر سراج الحق

محض باتوں اور مذمت کی قراردادوں سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوگا: سینیٹر سراج الحق
محض باتوں اور مذمت کی قراردادوں سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوگا: سینیٹر سراج الحق

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ محض باتوں اور مذمت کی قراردادوں سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوگا،برہان مظفر وانی کی شہادت کے بعد تحریک میں نیا جوش و جذبہ پیدا ہوا ہے،پٹھان کوٹ ، اڑی حملہ کے واقعات کے ڈانڈے انتہا پسند ہندو جماعتوں سے ملتے ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ سمجھوتہ ایکسپریس کو نظر آتش کرنے کا بھارتی جرنیل کا بیان آن ریکارڈ ہے،مودی حکومت سرجیکل سٹرائیک کا کوئی ثبوت اپنے عوام کے سامنے پیش نہیں کرسکی،بھارتی فوج کے اندر سرجیکل سٹرائیک کی صلاحیت ہی موجود نہیں، کشمیر ایشو پر جماعت اسلامی اول روز سے پاکستانی عوام کی امنگوں کی ترجمان ہے۔

انہوں نے مزید کہا ہے کہ موجودہ حکومت کی سرے سے کوئی خارجہ پالیسی ہی نہیں،اگر کوئی خارجہ پالیسی ہوتی تو لازماً کوئی وزیر خارجہ بھی ہوتا،بھارت امریکی شہ پر خود کو علاقے کا تھانیدار سمجھتا ہے ، ایل او سی اورمستقل سرحدوں کا احترام نہیں کرتا۔

مزید :

قومی -