امریکہ اور برطانیہ کا سعودی سرمایہ کانفرنس کے بائیکاٹ کا فیصلہ

امریکہ اور برطانیہ کا سعودی سرمایہ کانفرنس کے بائیکاٹ کا فیصلہ

واشنگٹن/لندن(آئی این پی ) امریکا اور برطانیہ نے سعودی صحافی کے مبینہ قتل میں ریاض کے ملوث ہونے کے شبے پر سعودیہ میں منعقد ہونے والی انوسٹمنٹ کانفرنس میں شرکت نہ کرنے کا سوچ رہے ہیں۔تفصیلات کے مطابق ترکی کے دارالحکومت استنبول میں واقع سعودی سفارت خانے میں صحافی جمال خشوگی کی گمشدگی پر برطانیہ اور امریکا نے سعودی عرب میں منعقد ہونے والی عالمی کانفرنس کے بائیکاٹ کا سوچ رہے ہیں۔ انوسٹمنٹ کانفرنس کے متعدد اسپانسرز اور میڈیا گروپس نے کانفرنس میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے، یہ فیصلہ جات جمال خشوگی کی گمشدگی واقعے کا نتیجہ ہے۔ محمد بن سلمان کی جانب سے ریفورم ایجنڈے کو پروموٹ کرنے کے لیے منعقدہ کانفرنس میں امریکی وزیر خزانہ اسٹیو میونچن اور برطانیہ کے عالمی ٹریڈ سیکریٹری لائم فوکس نے شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔برطانوی خبر رساں ادارے نے کہا ہے کہ استبول حکام کا خیال ہے کہ سعودی جاسوسوں نے صحافی کو سفارت خانے کے اندر قتل کردیا ہے، جبکہ ریاض حکومت نے دعوی کیا ہے کہ جمال خشوگی کے قتل سے متعلق افواہیں جھوٹ پر مبنی ہیں۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ اگر یہ ثابت ہوگیا کہ لاپتا سعودی صحافی جمال خشوگی استنبول میں سعودی قونصل خانے میں ہلاک کیے گیے ہیں تو ریاض حکومت کو سخت سزا دی جائے گی۔

مزید : عالمی منظر