بی سی سی آئی کے چیف ایگزیکٹو بھی ”می ٹو“ مہم کا شکار ہو گئے

بی سی سی آئی کے چیف ایگزیکٹو بھی ”می ٹو“ مہم کا شکار ہو گئے
بی سی سی آئی کے چیف ایگزیکٹو بھی ”می ٹو“ مہم کا شکار ہو گئے

  


نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی کرکٹ بورڈ (بی سی سی آئی) کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) راہول جوہری بھی ”می ٹو“ مہم کے عتاب کا شکار ہو گئے ہیں جس پر ان سے وضاحت طلب کر لی گئی ہے۔

راہول جوہری پر جنسی ہراسانی کا الزام سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ایک گم نام صارف کے جانب سے لگایا گیا ہے جس کے بعد انڈین کرکٹ بورڈ کے منتظمین کی کمیٹی نے راہول جوہری سے ان الزامات پر ایک ہفتے کے اندر وضاحت جمع کروانے کیلئے کہا ہے۔

اپنے بیان میں کمیٹی آف ایڈمنسٹریٹرز نے کہا کہ انہیں اس حوالے سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ سمیت کئی میڈیا رپورٹس مو صول ہو ئی تھیں، نامعلوم صارف کی جانب سے لگائے گئے الزام میں ان کی پچھلی ملازمت کا حوالہ بھی دیا گیا ہے۔کمیٹی نے مزید بتایا کہ راہول جوہری پر لگنے والے الزامات کا تعلق بھارتی کرکٹ بورڈ سے ان کے معاہدے سے نہیں ہے پھر بھی ان سے وضاحت طلب کی گئی ہے۔

واضح رہے کہ راہول جوہری 2016ءسے بھارتی کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کے عہدے پر کام کررہے ہیں۔ یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ می ٹو کی زد میں عالمی سطح پر مشہور ترین بھارتی اداکار امیتا بھ بچن بھی آچکے ہیں جبکہ ان کے ساتھ بھارتی فلمی صنعت کے کئی مزید نام بھی شامل ہیں اور آئے دن نئے نئے انکشافات سامنے آرہے ہیں۔

مزید : کھیل