عالمی فورم پر پاکستان کی جیت، میاں رضا ربانی جیت گئے!

عالمی فورم پر پاکستان کی جیت، میاں رضا ربانی جیت گئے!

  



سینٹ کے سابق چیئرمین، سینیٹر میاں رضا ربانی انٹر پارلیمانی یونین میں بلا مقابلہ مجلس عاملہ کے رکن منتخب ہو گئے ہیں، ان کے مد مقابل بھارت کے ششی تھرور نے حمایت نہ ملنے پر اپنی نامزدگی واپس لے لی تھی۔ یوں ایشیا پیسفک ممالک کی طرف سے نمائندگی پاکستان کے حصہ میں آ گئی۔ پارلیمانی یونین کا یہ اجلاس بلغراد میں ہوا، نئے انتخابات ہوئے، ایشیا پیسفک ممالک کی طرف سے ایک رکن کو متفقہ طور پر نامزد کرنا تھا، پاکستان کے وفد کی طرف سے میاں رضا ربانی کا نام پیش کیا گیا تو بھارت نے ششی تھرور کو آگے کر دیا۔یوں اندرونی طور پر لابنگ شروع ہوئی تو بھارت کو جلد ہی اندازہ ہو گیا کہ ان کو مثبت جواب نہیں ملا اور حمایت حاصل نہ ہو سکے گی۔ بھارت نے سرجوڑ کوشش کی لیکن کامیابی ان کے مقدر میں نہیں تھی۔ جب پاکستان کی طرف سے تجویز کیا گیا کہ نامزدگی کے لئے گروپ میں خفیہ رائے شماری کرا لی جائے تو ششی تھرور نے مقابلہ کرنے کی بجائے دستبردار ہونا مناسب جانا اور میاں رضا ربانی واحد امیدوار رہ گئے جس کے بعد ان کو نامزد کر دیا گیا اور وہ مجلس عاملہ کے رکن بن گئے۔یوں یہ اعزاز پاکستان کو ملا، تجزیہ کار حضرات کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی انسانیت سوز کارروائی سے شہرت کو بہت بھاری نقصان ہوا ہے اور بیشتر ممالک آزادانہ رائے کا وقت آئے تو بھارت کے خلاف ہوتے ہیں۔ہم پاکستان اور میاں رضا ربانی کو مبارکباد دیتے ہیں، میاں رضا تو بہت صاف ستھرے، راست گو، آئینی راہ پر چلنے والے شخص ہیں، ان کا انتخاب ان کی کارکردگی کے بعد باعث فخر محسوس ہو گا،بلاشبہ ہمارے وہ سفارتکار اور وفد والے بھی مبارکباد کے مستحق ہیں جن کی حوصلہ افزا محنت سے یہ کامیابی ملی ہے۔

مزید : رائے /اداریہ