اسلام آباد ہائیکورٹ نے شہری کی بازیابی کیلئے حکومت کو 10نومبر تک مہلت دے دی 

اسلام آباد ہائیکورٹ نے شہری کی بازیابی کیلئے حکومت کو 10نومبر تک مہلت دے دی 

  

اسلام آ باد (آئی این پی) اسلام آ باد ہائیکورٹ نے لاپتہ عمر عبداللہ کو بازیاب کرانے کیلئے حکومت کو دس نومبر تک مہلت د یتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ دو سال سے ایک شہری لاپتہ ہے اور کسی کو کوئی پتہ نہیں، ریاستی ادارے فیل ہو چکے،اسلام آباد سے سب سے زیادہ افراد کا لاپتہ ہونا ریاست کی ناکامی ہے۔تفصیلات کے مطابق لاپتہ افراد کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ میں عدالتی فیصلے کے مطابق سرکاری افسران اور تحقیقاتی ٹیم پر 20 لاکھ روپے جرمانے پر عمل درآمد نہ کرنے کیخلاف درخواست پر سماعت ہوئی۔ ڈی ایس پی لیگل کے ہمراہ اسٹیٹ کونسل حسنین حیدر تھہیم عدالت کے سامنے پیش ہوئے۔ جسٹس محسن اخترکیانی نے ریمارکس دیئے کہ جبری گمشدگیوں کے واقعات سے پاکستان کی ساکھ متاثر ہوتی ہے،وفاقی کابینہ کو بتا دیں کہ عدالت کا یہ موقف ہے،   ایسا تاثر مل رہا ہے کہ جیسے اسلام آباد میں دہشتگرد زیادہ ہوگئے ہیں۔ جسٹس محسن اختر کیانی نے ریمارکس دیئے کہ عدالت اپنے حکم پر عمل درآمد کرانے لیے کسی بھی حد تک جانے کو تیار ہے،میں سب کو ذاتی حیثیت میں طلب کرکے توہین عدالت کا نوٹس کرکے سزا دوں گا، ابھی کوئی آرڈر پاس نہیں کر رہے کیونکہ اس کے گہرے اثرات ہوں گے۔

عمر عبداللہ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -