نااہلی کیس،  الیکشن کمیشن کو فیصل واوڈا کے کاغذات نامزدگی سمیت تمام دستاویزات فراہم کرنے کا حکم 

      نااہلی کیس،  الیکشن کمیشن کو فیصل واوڈا کے کاغذات نامزدگی سمیت تمام ...

  

  اسلام آ باد(آئی این پی) اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصل واوڈا نااہلی کیس میں الیکشن کمیشن کو رکن قومی اسمبلی کے کاغذات نامزدگی سمیت تمام دستاویزات کی نقول فراہم کرنے کا حکم دے دیا۔  بدھ کو اسلام آباد (بقیہ نمبر8صفحہ 6پر)

ہائیکورٹ میں وفاقی وزیر فیصل واوڈا کو دہری شہریت چھپانے پر نااہل قرار دینے کی درخواست کی سماعت ہوئی۔ درخواست گزار نے موقف اختیارکیا کہ فیصل واوڈا نیالیکشن کمیشن میں دہری شہریت سے متعلق جھوٹا حلف نامہ جمع کرایا، انہوں نے 11 جون کوکاغذات نامزدگی جمع کرائے اور ریٹرننگ افسر نے 18جون کو کاغذات منظورکیے جب کہ فیصل واوڈا نے امریکی شہریت ترک کرنے کی درخواست 22 جون کو جمع کرائی۔ درخواست گزار نے کہا کہ کاغذات نامزدگی جمع کراتے وقت فیصل واوڈا امریکی شہریت رکھتے تھے لیکن چھپایا، انہوں نے غیر قانونی طورپرپبلک آفس سنبھال رکھاہے، سپریم کورٹ کیفیصلوں کیمطابق دہری شہریت چھپانیپر فیصل واوڈا کو نااہل کیا جائے۔ اس موقع پر درخواست گزارکے وکیل بیرسٹر جہانگیر جدون نے بتایا کہ فیصل واوڈاکو 29 جنوری کو نااہلی کیس میں جواب داخل کرانے کا حکم دیاگیا لیکن ان کی جانب سے آج بھی جواب داخل نہیں کرایا جاسکا۔ جہانگیر جدون نے کہا کہ فیصل واوڈا نے عدالتی نظام کا مذاق بنارکھا ہے، وہ گھربیٹھے ہنس رہے ہوں گے۔ اس پر جسٹس عامرفاروق نے ریمارکس دیے کہ عدالتی حکم کی خلاف ورزی ہوئی ہے، مجھیمعلوم ہیکہ اس کوکیسے ہینڈل کرناہے۔ بعد ازاں عدالت نے الیکشن کمیشن کو فیصل واوڈاکے  کا غذات نامزدگی سمیت تمام متعلقہ دستاویزات کی نقول فراہم کرنے کاحکم دیتے ہوئے سماعت 4 نومبر تک ملتوی کر دی۔

نا اہلی کیس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -