پاکستان عالمی سطح پر تنہاء، حکومت کا ایجنڈ املکی مفادات کے منافی ہے: فضل الرحمان 

پاکستان عالمی سطح پر تنہاء، حکومت کا ایجنڈ املکی مفادات کے منافی ہے: فضل ...

  

ََََََََََََََ چارسدہ(بیو رو رپورٹ)پاکستان ڈیموکریٹک مومنٹ (پی ڈی ایم) کو جمعیت علماء اسلام (ف) کے مرکزی امیر مولانا فضل رحمان نے کہا موجودہ حکومت سربراہ بین الاقوامی اسٹیبلشمنٹ ایجنٹ ہے اور انکے کے ایجنڈے پر کار بند ہے، دھاندلی اور آرمی اسٹیبلشمنٹ کے زریعے آنے والے نا اہل حکومت میں غریب خود کشیوں اور اپنے بچوں کو فروخت کرنے پر مجبور ہیں، پاکستان عالمی سطح پر تنہائی کا شکار ہے حکومت کا ایجنڈہ ملک کی مفادات کے خلاف جا رہاہے۔ ان خیالات کا ظہار انہوں نے اتمانزئی چارسدہ میں اے این پی کے سابق ضلعی صدر اور سابق صوبائی وزیر قانون بیرسٹر ارشد عبد اللہ کا جمعیت علماء اسلام (ف) میں شمولیت کے موقع پر ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب سے جے یو آئی کے صوبائی امیر مولانا عطاء الرحمان اور مرکزی رہنماء حاجی غلام علی سمیت صوبائی قائدین اور بیرسٹر ارشد عبد اللہ نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر جے یو ٓئی کے مرکزی سیکرٹری جنرل سنیٹر عبدلغفور حیدری بھی موجود تھے۔ مولانا فضل الرحمن نے اپنے خطاب میں کہا کہ  پورے ملک میں اس بات پر اتفاق ہے کہ حکمرانوں نے ملک کو تباہ کیا ہے۔ حکمرانوں نے غریب آدمی کی زندگی اجیرن کر دی ہے لوگ خودْکشیوں پر اتر آئے ہیں اور غریب اپنے بچے فروخت کرنے پر مجبور ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم ملک میں پارلیمنٹ  کی بالادستی اور سول حکمرانی چاہتے ہیں، آرمی اسٹیبلشمنٹ نے ایک نا اہل شخص کو ملک پر مسلط کر کے ملک کے کروڑوں عوام کو اذیت سے دوچار کیا ہے، ہماری پارٹی نے وطن عزیز کی آزادی کیلئے قربانیاں دی ہیں اور اب بھی ملک کو اسٹیشلمنٹ کی تسلط سے آزاد کرانے کی جنگ لڑ رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسٹیلشمنٹ اپنی غلطی کو تسلیم کرے اور پوری قوم سے معافی مانگے، ہم انہیں خبردار کرتے ہیں کہ نا اہل حکومت کی پشت پناہی سے ہٹ جائیں اگر ایسا نہ کیا گیا تو پھر اپنا خیر تلاش کریں۔مولانا فضل رحمان نے کہا کہ ہمیں ڈرانے کی کوشش کی جا رہی ہے، ہم کسی سے ڈرنے والے ہیں نا ہی کمزور ہیں ہم  انکے لیئے لوہے کے چنے ثابت ہو نگے۔ سولہ اکتوبر کوْگجرانولہ میں عوام کا سمندر امڈے گا۔انہوں نے کہا کہ تحریک چل پڑی ہے اور اسے آخر حد تک پہنچا کر دم لینگے انکو دسمبر دیکھنا نصیب نہیں ہو گا۔ ہم قانون اور آئین کے اندر جنگ لڑ رہے ہیں۔ حالات کو وہاں مت لے جاؤ جہاں سے واپسی ممکن نہ ہو۔انہوں نے مزید کہا کہ: آج بانی جے یو آئی مولانا مفتی محمود کی چالیسویں برسی ہے۔  مفتی محمود مرحوم کے قافلے کو پہلے سے زیادہ مقبولیت حاصل ہے۔ مفتی محمود مرحوم کا نظریہ اور تحریک پوری طرح فعال ہے۔  جے یو آئی کے کردار کو نظر انداز  نہیں کیا جا سکتا۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے بیرسٹر ارشد عبداللہ کا تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہوہ اپنے خاندان اور دوستوں سمیت جے یو آئی میں شمولیت کا اعلان کرتا ہے  اور جے یو آئی کو ہر ممکن سپورٹ فراہم کرینگے۔

مزید :

صفحہ اول -