گوجرانوالہ میں اپوزیشن کا جلسہ لیکن برطانیہ میں حکومت وقت کی امیدوں پر پانی پھر گیا، اپنی ہی پارٹی نے زوردارجھٹکا دیدیا

گوجرانوالہ میں اپوزیشن کا جلسہ لیکن برطانیہ میں حکومت وقت کی امیدوں پر پانی ...
گوجرانوالہ میں اپوزیشن کا جلسہ لیکن برطانیہ میں حکومت وقت کی امیدوں پر پانی پھر گیا، اپنی ہی پارٹی نے زوردارجھٹکا دیدیا

  

لندن (مجتبیٰ علی شاہ )یوکے پی ٹی آئی کی منتخب تنظیم نے جمعہ کو وزیر اعظم عمران خان کے معاون صاحبزادہ جہانگیر کے ایوین فیلڈ ہاؤس کے باہر منعقدہ احتجاج سے خود کو دور کردیا ہے جو پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے گوجرانوالہ

ریلی سے نواز شریف کی تقریر کے ساتھ ہوگا۔ اس سے قبل واٹس ایپ گروپ میں ایک پیغام بھیجا گیا تھا جس میں ایک دعوی صاحبزادہ جہانگیر سے منسوب کیا گیا تھا ، جس میں کہا گیا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان نے انہیں احتجاج کرنے کی ہدایت کی ہے۔ اس پیغام میں لکھا ہے: "وزیر اعظم نے مجھے ہدایت کی ہے کہ وہ 16 اکتوبر بروز جمعہ شام 3 بجے سے شام 6 بجے کے درمیان لندن میں نواز شریف کے گھر کے باہر ایک مظاہرے کا اہتمام کریں۔ یہ وہ وقت ہے جب این ایس گوجرانوالہ میں جلسے سے خطاب کریں گے۔ ہمارا احتجاج ٹیلی ویژن پر پاکستان میں براہ راست دکھایا جائے گا۔

ہم 6 افراد کے گروپوں میں کھڑے ہوں گے۔ پولیس نے ہمیں 6 گروپوں میں  ایک فاصلے پر کھڑے ہونے کی اجازت دے دی ہے۔ڈیلی پاکستان  سے بات کرتے ہوئے جہانگیر نے کہا کہ وہ ذاتی طور پر احتجاج کا اہتمام کررہے ہیں اور وزیر اعظم خان کا اس سے کوئی لینا دینا نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کے نام کے ساتھ ہی ایک جعلی پیغام گردش کیا گیا تھا اور یہ بات وزیر اعظم پاکستان سے منسوب کرنا غلط ہے۔ انہوں نے کہا کہ باقی پیغام درست تھا۔ تاہم ، پی ٹی آئی برطانیہ کی منتخب تنظیم نے کہا ہے کہ اس کا احتجاج سے کوئی لینا دینا نہیں ہے اور اس کے لئے کوئی سرکاری ہدایات نہیں بتائی گئیں۔

پی ٹی آئی کے منتخب کردہ صدر سیف چودرے  نے کہا کہ ہمیں پارٹی کی  پاکستان سے کوئی ہدایت نہیں آئی  اور پی ٹی آئی کی منتخبہ تنظیمیں کسی بھی منصوبہ بند احتجاج سے آگاہ نہیں ہیں اور جہانگیر کو خود ہی کام کرنا ہوگا۔ صدیقی نے مزید کہا  "پی ٹی آئی کے یوکے تنزیم نومبر کے پہلے ہفتے تک داخلی انتخابات میں حصہ نہیں لے رہے ۔ پی ایم ایل این کے ترجمان نے کہا ہے کہ اس سے کوئی جوابی احتجاج نہیں کیا جائے گا لیکن کارکنان نواز شریف کی تقریر کے دوران حسن نواز شریف کے دفتر میں جمع ہوں گے۔

مزید :

برطانیہ -