مشکوک ٹرانزیکشن کیس میں سابق صدر آصف زرداری کی بریت کی درخواست خارج 

  مشکوک ٹرانزیکشن کیس میں سابق صدر آصف زرداری کی بریت کی درخواست خارج 

  

       اسلام آباد(سٹاف رپورٹر،نیوز ایجنسیاں) احتساب عدالت نے سابق صدر آصف زرداری کی مشکوک ٹرانزیکشن کیس میں بریت کی اپیل ناقابل سماعت قرار دیکر خارج کردی۔سابق صدر آصف علی زرداری 8 ارب روپے کی مشکوک ٹرانزیکشن کے نیب ریفرنس میں احتساب عدالت اسلام آباد میں پیش ہوئے۔آصف زرداری کے وکیل فاروق ایچ نا  ئیک نے عدالت کو بتایا کیس میں اختیارات کے ناجائز استعما ل یا غیرقانونی رقم لینے کا الزام نہیں، عدالت نیب کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کرے۔ نیب ترمیمی آرڈیننس کے بعد کیس نہیں بنتا اور فردِ جرم عائد نہیں ہو سکتی۔احتساب عدالت کے جج اصغر علی نے کہا پہلے اِس درخواست کے قابلِ سماعت ہونے پر عدالت کو مطمئن کیا جائے، آصف علی زرداری کی درخواست قابلِ سماعت ہے یا نہیں، بعدازاں عدالت نے درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا جو چند گھنٹے بعد سنایا دیا، جس کے مطابق عدا لت نے سابق صدر کی درخواست کو ناقابل سماعت قرار دیکر خارج کردیا،یاد رہے اسلام آباد کی احتساب عدالت نے آصف زرداری کو فردِ جرم عائد کرنے کیلئے طلب کیا تھا۔ادھر سابق صدر آصف زرداری نے احتساب عدالت کے باہر صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا اگلی باری پیپلزپارٹی کی ہوگی، یہ حکومت ہے ہی نااہل، معیشت کی تباہی تک احتساب کا سلسلہ جاری رہیگا۔ عمران خان کیا صورتحال سنبھالیں گے، انہوں نے اپنے سیاستدان ہی مشکل سے سنبھالے ہوئے ہیں۔ آئی ایس آئی چیف کی تقرری سے متعلق ہمارا موقف ہے یہ حکومت ہے ہی نااہل، آرمی چیف کی مدت میں توسیع کے وقت بھی پانچ مسودے بنے تھے، مجھے علم نہیں فیصلہ تبدیل ہوگا یا برقرار رہے گا، اللہ خیر کریگا۔

ٓزرداری درخواست

مزید :

صفحہ اول -