گوجرہ، موٹر وے پر 3افراد کی دوشیزہ سے بد اخلاقی، مرکزی ملزم گرفتار

گوجرہ، موٹر وے پر 3افراد کی دوشیزہ سے بد اخلاقی، مرکزی ملزم گرفتار

  

         گوجرہ،ٹوبہ ٹیک سنگھ(نمائندگان خصوصی) ملازمت دلانے کا جھانسہ دے کر تین ملزموں نے موٹر وے پر نوجوان لڑکی کو بداخلاقی کا نشانہ بنا ڈالا، مرکزی ملزم گرفتار جبکہ دیگر دو واقعات میں کمسن بچی اور نوعمر لڑکے کو بھی بداخلاقی کا نشانہ بنا دیا گیا۔پولیس مصروف تفتیش۔تفصیل کے مطابق گارڈن ٹاؤن کینال روڈ کی رہائشی شاہین اختر نے پولیس کو درخواست میں بتایا کہ اسکی جواں سالہ بھانجی ارم النساء کو فون پر میسج آیا کہ بوتیک پرملازمت کیلئے آپ کا انٹر ویو ہے،جس کے لئے ملزمان حماد،رحمان اور لائبہ نے اسے گوجرہ شہر موڑ آنے کا کہا جس پر وہ اپنی بھانجی کو لیکر گوجرہ پہنچ گئی،جہاں سے ملزمان اسکی بھانجی کو انٹرویو کے بہانے کار میں ساتھ لے گئے اور گوجرہ سے ملزمان نے بذریعہ موٹر وے فیصل آباد کی طرف جاتے ہوئے راستہ میں کار میں ارم النساء کوبداخلاقیکا نشانہ بنا ڈالا اور فیصل آباد انٹر چینج سے اتر کر کار سے اتار دیا۔ پولیس نے ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے مرکزی ملزم حماد کو گرفتار کرلیا۔ دیگر واقعات میں  مو نگی بنگلہ کے نواحی چک نمبر243گ ب کلیان پور کا مقصود مسیح اور اس کی اہلیہ محنت مزدوری کے سلسلہ میں گھر سے باہر گئے ہوئے تھے کہ رات کو گاؤں کا شفقت رسول اس کی بیٹی13سالہ (ع) سے بداخلاقی کررہا تھا۔ صدر پولیس گوجرہ نے مقدمہ درج کر لیا،تیسرے واقعہ میں  چک نمبر283ج ب کے رہائشی17سالہ مبشر کو گاؤں ہی کے فیصل اپنی بیٹھک میں بلا کر پستول سے خوفزدہ کر کے بداخلاقی کر ڈالی اور اس کی ویڈیو بھی بنا لی۔ بعد ازاں ملزم ویڈیو دکھا کر مبشر کو بلیک میل کرمتعدد بار بداخلاقی کا نشانہ بناتا رہا ہے۔ ملزم فیصل مبینہ طور پر خود کو پولیس ملازم بھی ظاہر کرتا ہے۔ صدر پولیس گوجرہ نے متاثرہ بچے کے بھائی معظم علی کی درخواست پر مقدمہ درج کر کے ملزم کی تلاش شروع کر دی۔

بداخلاقی

مزید :

صفحہ اول -