گوجرہ موٹروے پر لڑکی سے مبینہ زیادتی کا واقعہ، گرفتار مرکزی ملزم نے حیران کن دعویٰ کر دیا

گوجرہ موٹروے پر لڑکی سے مبینہ زیادتی کا واقعہ، گرفتار مرکزی ملزم نے حیران کن ...
گوجرہ موٹروے پر لڑکی سے مبینہ زیادتی کا واقعہ، گرفتار مرکزی ملزم نے حیران کن دعویٰ کر دیا

  

فیصل آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )گوجرہ کے قریب فیصل آباد موٹر وے پر کار میں لڑکی سے مبینہ زیادتی کیس میں جیو فرانزک کے دوران اہم انکشافات سامنے آئے ہیں۔

پولیس کے مطابق واقعے کا مقدمہ 11 اکتوبر کو لڑکی کی خالہ کی مدعیت میں درج کیا گیا جس کے بعد مرکزی ملزم سمیت دو ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ واقعے میں استعمال ہونے والی کرائے کی گاڑی بھی قبضے میں لے لی گئی ہے۔ پولیس کے مطابق ملزم نے ابتدائی بیان میں بتایا ہے کہ لڑکی سے 15 روز قبل موبائل فون پر دوستی ہوئی تھی، وقوعہ کے روز وہ لڑکی اور اس کی دوست کو ان کی فرمائش پر فیصل آباد چھوڑنے گیا تھا۔ 

ڈی ایس پی گوجرہ کا کہنا ہے کہ جیو فرانزک میں ملزم اور متاثرہ لڑکی کے درمیان موبائل فون رابطوں کی تصدیق ہوئی ہے، لڑکی نے ملزم کو اپنی تصاویر بھی بھیجیں، لڑکی کا مستقل پتا نہیں ہے اور کال ڈیٹا ریکارڈ سے بھی اس کی پوزیشن ملتان،فیصل آباد اور ٹوبہ ٹیک سنگھ معلوم ہوئی ہے۔

پولیس کا کہنا ہےکہ لڑکی کو تفتیش کےلیے بلایا گیا ہے لیکن وہ شامل تفتیش نہیں ہوئی۔

مزید :

قومی -